نائجیریا:یونیورسٹی میں حملہ، پندرہ ہلاک

نائجیریا میں بم کا حملہ(فائل فوٹو) تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption جنوری میں بھی کانو میں بم کا ایک حملہ ہوا تھا جس میں ایک سو پچاس افراد ہلاک ہو گئے تھے

نائجیریا کے شہر کانو میں پولیس کا کہنا ہے کہ شہر کی باییرو یونیورسٹی پر حملے میں کم سے کم پندرہ افراد ہلاک ہو گئے ہیں۔ حملہ آوروں نے بندوقیں اور بموں کا استعمال کیا۔

اطلاعات کے مطابق حملہ آوروں کا نشانہ وہ عیسائی طلباء ہو سکتے ہیں جو ایک لیکچر تھیٹر میں عبادت کر رہے تھے۔ فوج کے ایک ترجمان نے بتایا حملے میں زخمی ہونے والے افراد کو ہسپتال پہنچا دیا گیا ہے۔

عینی شاہدوں نے بتایا کہ حملہ آور ایک کار اور موٹرسائیکلوں پر سوار ہو کر آئے تھے اور انہوں نہ دو مقامات پر جاری چرچ سروس پر حملہ کر دیا۔

ترجمان نے کہا کہ واقع کے فوراً بعد فوجیوں اور پولیس کے اہلکاروں نے یونیورسٹی کو گھیرے میں لے کر حملہ آور کی تلاش شروع کر دی۔ یونیورسٹی میں تاریخ کے مضمون کے لیکچرار محمد سلیمان نے رائٹرز کو بتایا کہ تیس منٹ تک بم دھماکے ہوتے رہے اور گولیاں چلتی رہیں۔

بی بی سی کی ہاؤسا سروس کے ایک رپورٹر نے بتایا کہ انہوں نے چھ لاشیں دیکھی ہیں لیکن سکیورٹی کے اہلکاروں کے مطابق ہلاک ہونے والوں کی تعداد اس سے زیادہ ہو سکتی ہے۔

فوری طور پر کسی تنظیم نے اس حملے کی ذمہ داری قبول نہیں کی۔

اسی بارے میں