یورپ: کاروباری سرگرمیاں تین سال میں سب سےکم

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service
Image caption مارکِٹ کی رپورٹ کے مطابق فرانسیسی اور جرمن فیکٹریوں میں کاروباری سرگرمیاں گزشتہ تین سال میں سب سے کم ہوگئی ہیں۔

ایک سروے کے مطابق یورپی کاروبار میں رواں سال مئی کے دوران گزشتہ تین سال کے مقابلے میں سب سے زیادہ مندی دیکھنے میں آئی ہے۔

مارکِٹ نامی کمپنی کی جانب سے کیے گئے سروے کے مطابق یورپی کاروبار کا اِنڈیکس پینتالیس اعشاریہ نو پر آ گرا ہے جو گزشتہ پینتیس ماہ میں سب سے کم ہے۔ اس کے نتیجے میں ڈالر کے مقابلے میں یورو کی قیمت بھی بائیس ماہ میں سب سے کم ہو گئی ہے۔

بدھ کی شام منعقد کیے گئے ایک اجلاس میں یورپی سربراہان بھی اس بحران سے نمٹنے کے لیے متفق نہیں ہو سکے۔

اس اجلاس میں یورپی یونین کے سربراہوں نے یہ ظاہر کیا کہ وہ چاہتے ہیں کہ یونان یورو زون میں رہے لیکن یورپی کونسل کے صدر ہرمن وین رومپوئی نے کہا کہ’اسے اپنے وعدوں کا احترام کرنا چاہیے۔‘

مارکِٹ کے ماہرِ اقتصاديات کرس ولیمسن کا کہنا ہے کہ ان کی کمپنی کی تحقیق کے مطابق یورپ میں اقتصادی بحران مئی کے مہینے میں مزید بگڑا ہے۔

انہوں نے بتایا کہ ان کی کمپنی جن نتائج پر پہنچی ہے وہ یورپ کے جی ڈی پی سے بھی ظاہر ہو رہے ہیں جو سال کے دوسرے حصے میں 0.5 فیصد سے گرا ہے۔

مارکِٹ کی رپورٹ کے مطابق فرانسیسی اور جرمن فیکٹریوں میں کاروباری سرگرمیاں گزشتہ تین سال میں سب سے کم ہوگئی ہیں۔

اسی بارے میں