قطر: شاپنگ مال میں آتشزدگی، انیس ہلاک

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters

قطر میں حکام کا کہنا ہے کہ دارالحکومت دوحہ میں ایک شاپنگ مال میں آتشزدگی سے کم از کم انیس افراد ہلاک ہوگئے ہیں۔

قطری وزارتِ داخلہ کے مطابق مرنے والوں میں سے تیرہ بچے ہیں جبکہ سفارتی ذرائع کا کہنا ہے کہ ہلاک شدگان میں سے چار ہسپانوی باشندے تھے۔

وزارتِ داخلہ کے مطابق مرنے والوں میں چار اساتذہ اور شہری دفاع کے دو اہلکار بھی شامل ہیں۔

آگ لگنے کی وجہ کی تحقیقات کی جا رہی ہیں۔

قطر کے وزیرِ داخلہ عبداللہ بن نصر التہاني کے مطابق ولاجیو مال نامی شاپنگ سنٹر میں آگ پیر کو مقامی وقت کے مطابق صبح ساڑھے گیارہ بجے کے قریب لگی جس پر کچھ دیر بعد قابو پا لیا گیا۔

سنہ دو ہزار چھ میں کھلنے والا ولاجیو مال قطر کے سب سے بڑے شاپنگ مراکز میں سے ایک ہے۔ اس شاپنگ مال میں سنیما گھر، آئس سكیٹگ رنگ اور ایک تفریح پارک بھی ہے اور بڑی تعداد میں لوگ یہاں تفریح اور خریداری کے لیے آتے ہیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty

خیال ہے کہ آگ ایک نرسری سے شروع ہوئی اور وہاں پھنسے بچوں کو نکالنے کے لیے آگ بجھانے والے عملے کو چھت توڑ کر اندر داخل ہونا پڑا۔

حادثے میں ہلاک ہونے والے ایک شخص کے رشتہ دار نے خبر رساں ایجنسی رائٹرز سے بات کرتے ہوئے کہا کہ ’ اس شاپنگ مال میں نہ تو آگ بجھانے کے آلات تھے اور نہ ہی فائر الارم‘۔

عینی شاہدین کے مطابق شاپنگ مال سے بہت دیر تک دھواں اٹھتا رہا جو پورے علاقے میں پھیل گیا۔

اطلاعات کے مطابق آتشزدگی کے بعد متاثرہ مقام سے لوگوں کے انخلاء کا عمل بہت افراتفری کا شکار رہا اور اس سلسلے میں ہنگامی خدمات فراہم کرنے والے اداروں کی کارکردگی پر بھی تنقید کی گئی ہے۔

اسی بارے میں