پال رائن نائب صدر کے عہدے کے امیدوار

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service

امریکہ کی سیاسی جماعت ریپبلکن پارٹی کے صدارتی امیدوار نے نائب صدر کے عہدے کے لیے پال رائن کو نامزد کیا ہے۔

بیالیس سالہ پال رائن وسکونسن سے ممبر کانگریس ہیں۔ مٹ رومنی پال رائن کے حوالے سے اعلان بحری جہاز یو ایس ایس وسکونسن پر ایک پریس کانفرنس کے دوران کریں گے۔

نائب صدر کے امیدوار کے لیے سینیٹر راب پورٹمین اور مینیسوٹا کے سابق گورنر ٹم پولینٹی کے نام بھی لیے جا رہے تھے۔

امریکی صدارتی انتخابات رواں سال نومبر میں ہوں گے۔ تازہ ترین اعداد و شمار کے مطابق صدر براک اوباما کو مٹ رومنی پر برتری حاصل ہے۔

بی بی سی کے شمالی امریکہ کے ایڈیٹر مارک مارڈیل کا کہنا ہے کہ مٹ رومنی کا یہ فیصلہ نہایت دلیرانہ ہے اور نظریاتی ہے۔

نائب صدر کے امیدوار پال رائن کی وجہ شہرت متبادل بجٹ ہے جو انہوں نے صدر اوباما کے مالیاتی منصوبے کے حوالے سے پیش کیا تھا۔

اس بجٹ میں پال نے ٹیکس، پینشن اور خوراک کی مد میں دی جانے والی امداد میں کمی کرنے کی تجویز دی تھیں۔ اس کے علاوہ انہوں نے حکومتی طبی سہولیات میں بھی تبدیلی پر زور دیا ہے۔

پال رائن کا اس بات پر اصرار ہے کہ ان تجاویز سے کم آمدنی کے افراد متاثر نہیں ہو گے بلکہ نئی نوکریاں نکلیں گی۔

پال رائن ریپبلکن جماعت کے کنٹرول میں ایوانِ نمائندگان کی بجٹ کمیٹی کے سربراہ بھی ہیں۔ امید کی جا رہی ہے کہ وہ نوکریوں، معیشت اور بجٹ کے خسارے جیسے ایشوز کو اٹھا کر انتخابی مہم میں تیزی لائیں گے۔

یاد رہے کہ دو ہفتوں میں ریپبلکن جماعت فلوریڈا میں ہونے والے اجلاس میں مٹ رومنی کا صدارتی امیدوار ہونے کا باضابطہ اعلان کرے گی۔

اسی بارے میں