امریکہ: چينی کمپنی کا صدر اوباما پر مقدمہ

آخری وقت اشاعت:  بدھ 3 اکتوبر 2012 ,‭ 09:19 GMT 14:19 PST

وائٹ ہاؤس نے چینی کمپنی کے ونڈ ملز کے منصوبے کو روک دیا تھا

امریکہ میں کام کرنے والی ایک نجی چینی کمپنی نے صدر باراک اوباما کے خلاف قانون توڑنے اور اپنے دائرہ اختیار سے تجاوز کرنے کا مقدمہ دائر کیا ہے۔

امریکی صدر نے سکیورٹی کی وجوہات کے سبب’رالس کارپوریشن‘ نامی کمپنی کے ایک معاہدے کو روک دیا تھا۔

اس نجی چینی کمپنی کے رواں برس کے شروع میں ریاست اوریگان میں امریکی بحری بیڑے کے پاس ہوا سے بجلی پیدا کرنے کے لیے ( ونڈ ملز) کے ایک منصوبے کے معاہدے کو روک دیا گیا تھا۔

لیکن امریکی صدر نے قومی سلامتی کی بنیاد پر اس پروجیکٹ کو روکنے کے حوالے سے ایک حکمنامے پر گزشتہ ہفتے دستخط کیے تھے۔

امریکی عدالت میں دائر کی گئی درخواست میں الزام عائد کیا گیا ہے کہ امریکی حکومت نے اپنے دائرہ اختیار سے تجاوز کیا ہے۔

امریکہ میں بیرونی سرمایہ کاری کو روکنے کے حوالے سےگزشتہ بائیس برسوں میں اپنی نوعیت کا پہلا واقعہ ہے۔

وائٹ ہاؤس کی جانب سے اس منصوبے کو روکنے کا حکمنامے میں کہا گیا تھا کہ’ایسے قابل بھروسہ ثبوت ہیں جو مجھے یہ یقین دلاتے ہیں کہ رالس کارپوریشن ایسے اقدامات کر سکتی ہے جس سے امریکہ کی قومی سلامتی کو خطرہ لاحق ہو سکتا ہے۔‘

"ایسے قابل اعتماد ثبوت ہیں جو مجھے یہ یقین دلاتے ہیں کہ رالس کارپوریشن ایسے اقدامات کریگي جس سے امریکہ کی قومی سلامتی کو خطرہ لاحق ہوسکتا ہے۔"

لیکن کمپنی کا کہنا ہے کہ صدر اوباما نے اس الزام کی حمایت میں کسی طرح کے شواہد پیش نہیں کیے ہیں۔

امریکی فوج کا کہنا ہے کہ وہ اوریگان کے بحری بیڑے سے ڈرون اور دیگر فوجی الیکٹرانک مشینری کا تجربہ کرتے ہیں۔

لیکن کمپنی کا کہنا ہے کہ منصوبے پر کام کے حوالے سے امریکی سکیورٹی کو کوئي خطرہ لاحق نہیں ہے۔

کمپنی کے ایک ترجمان نے چین کے سرکاری خبر رساں ادارے زنہوا نیوز سے بات چيت میں کہا کہ صدر باراک اوباما نے اپنی انتخابی مہم کے حوالے سے ایسا قدم اٹھایا ہوگا یا پھر امریکی ونڈ ملز کے مفاد کو مد نظر رکھ کر اس طرح کی کارروائی کی ہوگي۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔