کمیونسٹ پارٹی کا اجلاس ختم، قیادت کا اعلان کل

آخری وقت اشاعت:  بدھ 14 نومبر 2012 ,‭ 04:01 GMT 09:01 PST

اجلاس کے موقعے پر بیجنگ میں سخت سیکیورٹی کا اہتمام کیا گیا تھا۔

چین میں نئے رہنماؤں کے انتخاب کے لیے کمیونسٹ پارٹی کا ایک ہفتے پر محیط اجلاس ختم ہو گیا ہے اور منتخب رہنماؤں کا اعلان جمعرات کو کیا جائے گا۔

بیجنگ کے عظیم عوامی ہال میں بائیس سو سے زیادہ مندوبین ایک نئی مرکزی کمیٹی کا انتخاب کر رہے ہیں۔یہ کمیٹی بعد میں پولٹ بیورو کی قائمہ کمیٹی کا تعین کرے گی جو چین کی اعلیٰ ترین فیصلہ گر مجلس ہو گی۔

اس نئی قیادت کا جمعرات کے روز اعلان کیا جائے گا اور اس کو چین کے معاشی اور سیاسی مستقبل کی سمت کی علامات کے لیے بڑے غور سے پرکھا جائے گا۔

شی جن پنگ اور لی کی چیانگ علی الترتیب پارٹی کے رہنما اور نائب رہنما منتخب ہوں گے۔ توقع ہے کہ شی مارچ دو ہزار تیرہ میں ہو جن تاؤ کی جگہ ملک کے نئے صدر کا عہدہ سنبھال لیں گے۔

قائمہ کمیٹی کی درست ساخت کا ابھی اندازہ نہیں ہے اور اس کا پتا باضابطہ اعلان کے بعد چلے گا۔ اس کے ارکان کی تعداد نو سے کم کر کے سات کی جا سکتی ہے۔

چین کی قیادت ہر دس سال بعد بدلتی ہے۔ پارٹی کے اجلاس کا آغاز آٹھ نومبر کو ہو جن تاؤ کی طرف سے کارکردگی کی رپورٹ سے ہوا۔

اس کے بعد سے تمام فیصلے بند دروازوں کے پیچھے ہوئے ہیں، جب کہ درحقیقت بہت سے اہم انتخاب وقت سے پہلے ہی کیے جا چکے ہیں۔

مرکزی کمیٹی ملک کے اعلیٰ ترین انتظامیہ ہے۔ اس کے اکثر ارکان پارٹی، حکومت اور فوج کے سرکردہ رہنما ہیں۔اس کمیٹی کا ہر سال اجلاس ہوتا ہے جس میں اہم پالیسیوں پر فیصلے کیے جاتے ہیں۔ یہ کمیٹی ملک کے طاقتور عہدوں پر افراد کو تعینات کرتی ہے۔

تاہم بی بی سی کے ریمنڈ لی کہتے ہیں کہ بعض اوقات پولٹ بیورو فیصلے کر کے انھیں حتمی منظوری کے لیے کمیٹی کے پاس بھیج دیتی ہے۔ اس لیے بعض لوگ اسے ’ربر سٹیمپ‘ کمیٹی بھی کہتے ہیں۔

ہمارے نمائندے کے مطابق مرکزی کمیٹی کے بہت سے ارکان ریٹائرمنٹ کی عمر کو پہنچ گئے ہیں، اس لیے بڑے پیمانے پر توقع کی جا رہی ہے کہ نئی کمیٹی میں کم از کم آدھے چہرے نئے ہوں گے۔

اسی بارے میں

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔