دیوالیہ کمپنی کوڈک کے جملہ حقوق کی فروخت

آخری وقت اشاعت:  جمعرات 20 دسمبر 2012 ,‭ 14:21 GMT 19:21 PST

کوڈاک دستی کیمرہ بنانے والی پہلی کمپنی ہے

تصاویر کی دنیا کی مشہور کمپنی ایسٹمین کوڈک نے اپنی ڈیجٹل تصاویر کے جملہ حقوق باون کروڑ پچاس لاکھ ڈالر میں فروخت کر دیے ہیں۔

جملہ حقوق کی خریداری میں کمپنیوں کے کنسورشیم نے حصہ لیا۔ان کمپنیوں میں ایپل اور گوگل کمپنی بھی شامل تھیں۔

کوڈک کا شمار پہلا دستی کیمرہ بنانے والی کمپنی میں ہوتا ہے۔ کمپنی کا کہنا ہے کہ دیوالیہ ہونے کے بعد واجب الادا قرضے چُکانے کے لیے تصاویری جملہ حقوق فروخت کیے گئے ہیں۔

کوڈک نے رواں سال جنوری میں دیوالیہ ہونے کی درخواست امریکی عدالت میں جمع کروائی تھی۔

کوڈک کے گیارہ سو جملہ حقوق کی فروخت کے لیے بولیاں لگائی گئیں۔ان حقوق کی نیلامی کا ہدف دو ارب ساٹھ کروڑ ڈالر مقرر کیا گیا تھا جبکہ پیٹنٹ کی فروخت مقرر کردہ ہدف سے کم رہی۔

کوڈک کے جملہ حقوق خریدنے والی کمپنیوں کے کنسورشیم میں ایپل، مائیکروسافٹ، گوگل، فیس بک، ایمزون، بلیک بیری، فیوجی فلمز اور ایچ ٹی سی سمیت دیگر کمپنیاں شامل تھیں۔

کوڈک اور خریدار کمپنیوں کے مابین ہونے والا معاہدہ امریکی بینک کرپسی عدالت کی منظوری سے مشروط ہے۔

کمپنی نے امریکی قوانین کے تحت جنوری میں اپنی دیوالیہ حیثیت ظاہر کی تھی۔ جس کے بعد کوڈک کو اپنے اثاثے فروخت کر کے قرض ادا کرنے کی مہلت مل گئی ہے۔

کوڈک نے ڈیجٹل کیمرہ کا کاروبار ختم کرنے کے بعد رواں سال جون میں جملہ حقوق کی فروخت کے لیے درخواست جمع کرائی تھی۔

کوڈک کی دیوالیہ کمپنی کی حیثیت دو ہزار تیرہ کے پہلے چھ ماہ میں تک برقرار رہے گی۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔