اٹلی: برلسکونی کی درخواست مسترد

آخری وقت اشاعت:  پير 14 جنوری 2013 ,‭ 17:30 GMT 22:30 PST

برلسکونی نے کریما المحروغ عرف روبی کے ساتھ سیکس کرنے کی تردید کی تھی

اٹلی کی ایک عدالت نے ملک کے سابق وزیر اعظم سلویو برلسکونی کی جانب سے ان کے خلاف ایک کم عمر لڑکی کے ساتھ سیکس کرنے کے مقدمے کی کارروائی روکنے کی درخواست مسترد کر دی ہے۔

اٹلی کے شہر میلان کی عدالت نے یہ فیصلہ بھی کیا ہے کہ اسے کریما المحروغ عرف روبی کی گواہی سننے کی ضرورت نہیں ہے۔

واضح رہے کہ اٹلی کے سابق وزیر اعظم سلویو برلسکونی کے وکلاء نے عدالت سے استدعا کی تھی کہ ملک میں ہونے والے انتخابات مہم کے دوران موکل کے خلاف کارروائی روک دی جائے۔

یاد رہے کہ برلسکونی اور کریما المحروغ عرف روبی نے ایک دوسرے کے ساتھ سیکس کرنے کی تردید کی تھی۔

اٹلی میں اٹھارہ سے کم عمر کی لڑکی کے ساتھ سیکس کرنا جرم ہے۔

برلسکونی اٹلی میں ہونے والے انتخابات میں وزیر اعظم کے عہدے کے لیے تیسری بار امیدوار ہیں۔

انہوں نے نومبر سنہ دو ہزار گیارہ میں اپنے عہدے سے استعفیٰ دے دیا تھا۔

چھہتر سالہ برلسکونی پر الزام ہے کہ انہوں نے سنہ دو ہزار دس میں کریما المحروغ عرف روبی سے اس وقت سیکس کیا تھا جب ان کی عمر سترہ سال تھی۔

برلسکونی نے اس بات کا اعتراف کیا ہے کہ انہوں نے کریما المحروغ عرف روبی کو پیسے دیے تھے تاہم ان کا یہ اصرار ہے کہ یہ پیسے کریما المحروغ عرف روبی کی ضرورت پوری کرنے کے لیے دیے تھے۔

برلسکونی کا شمار اٹلی کے طویل عرصے تک حکمران رہنے والے وزیراعظموں میں ہوتا ہے۔ وہ نومبر دو ہزار گیارہ میں اپنے عہدے سے مستعفی ہوئے تھے۔

ان کے تیسرے دورِ حکومت میں معشیت سست روی کا شکار رہی اور قرضوں کا حجم دو اعشاریہ ساٹھ ٹریلین ڈالر تک پہنچ گیا تھا۔

وزیراعظم کا عہدہ چھوڑنے کے بعد انہیں مختلف مقدمات کا سامنا ہے جبکہ وہ کئی مالی اور جنسی سکینڈلوں میں بھی ملوث رہے ہیں۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔