اوگو چاویس کی علاج کے بعد ملک واپسی

آخری وقت اشاعت:  منگل 19 فروری 2013 ,‭ 23:51 GMT 04:51 PST
چاویس

صدر چاویس کی ٹویٹ جس میں انہوں نے ملک واپسی کا بتایا

لاطینی امریکہ کے ملک وینزویلا کے صدر اوگو چاویس نے ٹوئٹر پر اعلان کیا ہے کہ وہ کیوبا میں کینسر کے علاج کے بعد ملک واپس پہنچ گئے ہیں۔

صدر چاویس نے اس بات کا اعلان سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر تین پیغامات کے زریعے کیا جس میں انہوں نے کیوبا کے رہنماؤں راؤل اور فیدل کاسترو کا شکریہ ادا کرنے کے ساتھ ساتھ وینزویلا کے عوام کا بھی شکریہ ادا کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ ان کا علاج ان کے ملک میں بھی اب جاری رہے گا۔

اوگو چاویس انیس سو ننانونے سے وینزویلا کے سربراہ ہیں اور اکتوبر دو ہزار بارہ میں انہیں اگلے چھ ماہ کے لیےدوبارہ صدر منتخب کیا گیا تھا مگر ان کی باضابطہ حلف برداری کو ان کی بیمارے کے باعث ملتوی کر دیا گیا تھا۔

صدر چاویس گیار دسمبر کو کیوبا علاج کے لیے گئے تھے اور اٹھارہ ماہ میں ان کے چار آپریشن ہو چکے ہیں۔

صدر چاویس کے ٹوئٹر پر انتالیس لاکھ فالوورز ہیں جنہیں انہوں نے یہ ٹویٹس بھجوائیں

گزشتہ ہفتے حکومت کی جانب سے ان کی تصاویر جاری کی گئیں جن میں سے ایک تصویر میں اٹھاون سالہ وینزويلا کے رہنما کو مسکراتے ہوئے دکھایا گیا ہے جس میں وہ اخبار پڑھ رہے ہیں اور ان کے پاس ان کی دونوں بیٹیاں موجود ہیں۔

کچھ تصاویر میں چاویس کو کیوبا کی کمیونسٹ پارٹی کااخبار’گرانما‘ پڑھتے دکھایا گیا ہے۔

ان تصویروں کو ٹیلی ویژن پر ان کے داماد اور وزیر سائنس نے پیش کیا اور بتایا کہ یہ تصاویر جمعرات کو لی گئیں۔

واضح رہے کہ اوگو چاویس گزشتہ برس گیارہ دسمبر سے عوام کے سامنے نہیں آئے ہیں۔

صدر چاویس کے ٹوئٹر پر انتالیس لاکھ فالوورز ہیں جنہیں انہوں نے یہ ٹویٹس بھجوائیں۔

ایک ٹویٹ میں انہوں نے کہا کہ ’ہم وینزویلا کی سرزین پر واپس پہنچ گئے ہیں، خدا تیرا شکر ہےت میرے عوام آپ کا بھی شکریہ میرا علاج اب یہاں جاری رہے گا۔‘

مقامی میڈیا نے نائب صدر نکولس مدورو کے حوالے سے بتایا کہ صدر چاویس مقامی وقت کے مطابق دوپہر کے وقت کے قریب ہوائی اڈے پر اترے جہاں سے انہیں سیدھا کراکس کے فوجی ہسپتال منتقل کیا گیا۔

صدر چاویس مقامی وقت کے مطابق دوپہر کے وقت کے قریب ہوائی اڈے پر اترے جہاں سے انہیں سیدھا کراکس کے اس فوجی ہسپتال منتقل کیا گیا

سرکاری ٹی وی نے بھی اس خبر کو نمایاں جگہ دی اور ایک میزبان نے کہا کہ مبارک ہو صدر واپس آ گئے ہیں۔ کمانڈر چاویس واپس پہنچ گئے ہیں۔

یہی حال شہر کی سڑکوں کا بھی تھا جہاں صدر کے حامی بڑی تعداد میں مرکزی بولیور چوک اور ہسپتال کی جانب بڑھنا شروع ہوئے جہاں انہیں رکھا گیا تھا۔

صدر چاویس کے کینسر کی تشخیص جون سنہ دو ہزار گیارہ میں ایک سرجری کے دوران ہوئی تھی اور اٹھارہ ماہ میں اب تک ان کے چار آپریشن ہو چکے ہیں۔

ہوانا کے اپنے حالیہ سفر سے قبل چاویس نے اپنے حامیوں کو یہ تجویز دی تھی کہ وہ نائب صدر نکولس مدورو کو ان کے جانشین کے طور پر دیکھیں جنہوں نے چاویس کی غیر موجودگی میں ملک کی باگ ڈور سنبھال رکھی ہے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔