پوپ بینیڈِکٹ ویٹیکن سے رخصت

آخری وقت اشاعت:  جمعرات 28 فروری 2013 ,‭ 17:47 GMT 22:47 PST
پوپ بینیڈکٹ

سابق پوپ ’پوپ ایمرِٹس‘ کے خطاب سے جانے جائیں گے

کیتھولک عیسائیوں کے روحانی پیشوا پوپ بینیڈکٹ شانزدہم جمعرات کو ویٹیکن چھوڑ گئے۔

وہ جمعرات کے سات بجے شام کے بعد پاپائے روم کے عہدے سے دستبردار ہو گئے ہیں اور نئے پوپ کے انتخاب تک ان کے نائب، کارڈنل تارسیسیو بیرتونے ان کے فرائض سر انجام دیں گے۔

پچاسی سالہ پوپ بینیڈکٹ پہلے پاپائے روم ہیں جو اپنی زندگی میں ہی اس عہدے سے دستبردار ہوئے ہوں۔

جمعرات کو مقامی وقت کے مطابق سہہ پہر کے چار بجے وہ ہیلی کاپٹر کے ذریعے ویٹیکن سے روم کے قریب پوپ کے لیے کاستل گاندولفو نامی مخصوص آرام گاہ کے لیے روانہ ہو گئے۔ جب وہ ہیلی کاپٹر پر سوار ہوئے تو کلیسے کی گھنٹیاں بجائی گئیں۔

روانگی سے پہلے پوپ بینیڈکٹ نے اپنے کارڈنل پادریوں کے ساتھ ایک اجلاس میں پوپ کا عہدہ سنبھالنے والے نئے پاپائے روم سے غیر مشروط فرمابرداری اور احترام کا عہد کیا۔

کاستل گاندولفو پہنچ کر پوپ نے آرام گاہ کی عمارت کی ایک کھڑکی سے منتظر ہجوم کے سامنے آئے۔

پوپ کے عہدے سے ان کے مستعفی ہونے کا حتمی مرحلہ وہ ہے جب اس مقام سے ویٹکن کی فوج یعنی سوئس گارڈم کے اہلکار وہاں سے چلے جائیں گے۔

جرمنی سے تعلق رکھنے والے پوپ کا نام جوزف ریٹزِنگر ہے تاہم وہ پوپ بینیڈکٹ کے طور پر ہی جانے جائیں گے اور ان کو ’پوپ ایمرِٹس‘ کے طور پر جانا جائے گا۔ وہ اب لال کے بجائے سفید رنگ کا سادہ لباس پہنیں گے اور ان کے روایتی لال جوتوں کی جگہ بھورے رنگ کے جوتے پپہنا کریں گے۔

توقع ہے کہ ان کی خاص انگوٹھی کو تباہ کر دیا جائے گا۔ اس انگوٹھی پر پوپ کا نام نصب ہوتا ہے اور اس سے کئی اہم دستاویزات پر مہر لگائی جاتی ہے۔

بعد میں سابق پوپ ویٹیکن سٹی کی پہاڑی پر ایک راہب خانہ منتقل ہو جائیں گے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔