افغان وزراتِ دفاع کے باہر خود کش حملہ ، نو ہلاک

آخری وقت اشاعت:  ہفتہ 9 مارچ 2013 ,‭ 07:57 GMT 12:57 PST

خود کش حملہ آور نے مقامی وقت کے مطابق صبح نو بجے افغان وزارتِ خارجہ کے مرکزی دروازے کو نشانہ بنایا

امریکہ کے وزیر دفاع چک ہیگل کے دورۂ افغانسان کے موقع پر افغان وزارتِ دفاع کے باہر ہونے والے ایک خود کش حملے میں کم سے کم نو افراد ہلاک اور بیس زخمی ہو گئے۔

افغان سکیورٹی حکام نے بی بی سی نیوز کو بتایا کہ خود کش حملے میں بیس دیگر افراد زخمی ہوئے۔

افغان حکام کے مطابق خود کش حملہ آور ایک سائیکل پر سوار تھا۔

دوسری جانب طالبان کے شدت پسندوں نے اس حملے کی ذمہ داری قبول کی ہے۔

واضح رہے کہ یہ دھماکہ امریکی وزیر دفاع کے افغانستان پہنچنے کے کچھ دیر بعد ہوا۔

امریکی وزیر دفاع چک ہیگل افغانستان کے سرکاری دورے پر سنیچر کو کابل پہنچے تھے۔

خیال رہے کہ چک ہیگل دھماکے کے وقت کسی اور جگہ پر بریفینگ میں موجود تھے۔

کابل پولیس کے سربراہ محمد ظہیر نے بی بی سی کو بتایا کہ دھماکے کے بعد زخمیوں کو ایمبولینسز کے ذریعے متعدد ہسپتالوں میں پہنچایا گیا۔

اطلاعات کے مطابق خود کش حملہ آور نے مقامی وقت کے مطابق صبح نو بجے افغان وزارتِ خارجہ کے مرکزی دروازے کو نشانہ بنایا۔

دھماکے کے عینی شاید عبدل غفور نے خبر رساں ایجنسی اے پی نے بتایا کہ دھنماکے سے پورا علاقہ گونج اٹھا۔

انہوں نے کہا ’میں نے لاشوں اور زخمیوں کو فرش پر ادھر اُدھر پڑے دیکھا‘۔

عینی شاید کے مطابق دھماکے کے بعد فائرنگ شروع ہو گئی اور وہ وہاں سے بھاگ گئے۔

دریں اثناء طالبان نے ایک ای میل کے ذریعے اس حملے کی ذمہ داری قبول کرتے ہوئے کہا ہے اس کے شدت پسندوں نے افغان وزارتِ دفاع کے داخلی راستوں میں سے ایک راستے کو نشانہ بنایا۔

طالبان نے اپنے ای میل پیغام میں کہا ہے کہ یہ حملہ امریکی وزیرِ دفاع چک ہیگل کے افغانستان کے دورے پر کیا گیا جس کا مقصد امریکی وزیر دفاع کو پیغام دینا تھا۔

افغانستان میں اس وقت ایک اندازے کے مطابق 66,000 ہزار امریکی فوجی موجود ہیں اور آیندہ برس ان فوجیوں کی کمی کے بعد یہ تعداد 34,000 ہزار تک پہنچ جائے گی۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔