جامعۂ الازہر، سینکڑوں طلبا پیٹ کی بیماری میں مبتلا

محمد مرسی
Image caption صدر محمد مرسی نے قاہرہ میں ایک ہسپتال کا دورہ کیا جہاں متاثرہ طلبا کو رکھا گیا ہے

جامعۂ الازہر کے پانچ سو کے قریب طلبا یونیورسٹی میں ناقص کھانا کھانے سے پیٹ کی بیماری میں مبتلا ہوگئے اور قاہرہ کے مختلف ہسپتالوں میں داخل کروا دیا گیا۔ مصر کے صدر محمد مرسی نے ہسپتال میں طلبا کی تیمار داری کی ہے۔

پیر کے روز طلبا نے یونیورسٹی میں مہیا کی جانے والی غیر معیاری خوراک پر احتجاج کیا ہے۔سینکڑوں طلبا نے یونیورسٹی کیمپس میں احتجاجی مظاہرہ کیا اور یونیورسٹی کے چانسلر کی برطرفی کا مطالبہ کیا۔

مصر کی وزارت صحت نے کہا ہے کہ وہ تمام طلبا جو پیٹ کی تکلیف میں مبتلا ہوئے ہیں وہ ایک ہاسٹل میں رہائش پذیر تھے۔

مصر کے صدر محمد مرسی نے قاہرہ میں ایک ہسپتال کا دورہ کیا ہے جہاں متاثرہ طلبا کو رکھا گیا ہے۔

مصر کے پراسیکوٹر نے معاملے کی تحقیات کا حکم دے دیا ہے۔

مصر کے تعلیمی اداروں میں صحت کے بنیادی اصولوں کا اکثر خیال نہیں رکھا جاتا لیکن یہ اپنی نوعیت کو واحد واقع ہے جس میں اتنی بڑی تعداد میں طلبا پیٹ کی بیماری میں مبتلا ہو گئے ہیں۔

مصر کی الازہر یونیورسٹی سنی اسلام کی سب سے بڑی تعلیمی درسگاہ تصور کی جاتی ہے۔