دیوار میں چھپے سپرمین کامک کی نیلامی

Image caption بیوی کے رشتہ داروں سے جھگڑے میں سپرمین کامک کا پچھلا صفحہ پھٹ گیا تھا

انیس سو اٹھتیس میں شائع ہونے والا سپرمین کامک کا ابتدائی شمارہ نیلامی کےلیے پیش کر دیاگیا ہے۔ ماہرین کا کہنا ہے کہ کامک کا یہ شمارہ سپرمین کامک کی پچھلی تمام نیلامیوں کےریکارڈ توڑ دے گا۔

ابھی تک اس شمارے کی ایک لاکھ سینتیس ہزار ڈالر قیمت لگائی جا چکی ہے اور نیلامی کے ختم ہونے میں ابھی کافی وقت باقی ہے۔ پینتیس لوگ اس نیلامی میں حصہ لے رہے ہیں۔

سپرمین کامک کا یہ نادر شمارہ امریکی ریاست منیسوٹا کے ایک غیر آباد گھر کی دیوار سے ملا ہے۔ اس کامک کو ڈھونڈنے والے شخص ڈیوڈ گونزالیز نے بتایا کہ جب وہ اس غیر آباد گھر کی دوبارہ مرمت کر رہے تھے تو اسے دیوار کے ایک سوراخ سے کچھ اخبارات ملے جن میں سپرمین کامک کا یہ شمارہ بھی تھا۔

انہوں نے بتایا کہ جب انہیں یہ شمارہ ملا تو یہ مکمل حالت میں تھا لیکن اب اس شمارے کا پچھلا صفحہ پھٹ چکا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ ان کی بیوی کے کچھ رشتہ دار اس کامک کو لینا چاہتے تھے اور اسی جھگڑے میں شمارے کا پچھلا صفحہ پھٹ گیا۔

نیلامی گھر کے مالک ڈیوڈ ونسیٹ کا کہنا ہے کہ صرف ایک صحفہ پھٹنے سے اس نادر شمارے کی مالیت میں پچھہتر ہزار ڈالر کی کمی واقع ہوئی ہے۔

اس سپرمین کامک پر اس وقت پینتیس افراد بولی لگا رہے ہیں اور ماہرین کا خیال ہے کہ یہ کامک ایک لاکھ پچاس ہزار ڈالر سے زیادہ فروخت ہو جائے گا۔

نیلامی گھر کے مالک کا کہنا ہے کہ یہ نایاب کامک پچھہتر سال تک دیوار کے ایک سوراخ میں پڑا رہا۔ اس سے پہلے سب سے مہنگا کامک دو اعشاریہ ایک ملین ڈالر میں نیلام ہو چکا ہے۔

ڈیوڈ گونزالیز نے غیر آباد گھر کو مرمت کے لیے خریدا تھا جہاں وہ اب اپنے چار بچوں کے ہمراہ رہائش پذیر ہیں۔

سپر مین کردار کے بارے میں کہا جاتا ہے کہ یہ پہلا سپر ہیرو ہے جو کارٹونوں کے سلسلے کی صورت میں شائع کیا گیا تھا۔ جس کے بعد بیٹ مین اور سپائیڈرمین کے کامکس بھی شائع ہونا شروع ہوئے۔

اسی بارے میں