امریکہ:ایریزونا میں انیس فائر فائٹرز ہلاک

امریکہ کی مغربی ریاست ایریزونا میں حکام کا کہنا ہے کہ جنگل میں لگنے والے آگ بھجانے میں مصروف انیس فائر فائٹرز ہلاک ہو گئے ہیں۔

جمعے کو ایریزونا کے جنگلات میں گرم موسم اور ہوا میں نمی کے تناسب میں کمی کے باعث آگ بھڑک اُٹھی۔

ایریزونا کے جنگل میں لگنے والی آگ کو رہائشی علاقے تک پہنچنے سے روکنے کے لیے تقریباً دو سو فائر فائیٹرز آگ بجھانے کے عمل میں مصروف ہیں اور اب تک پچاس مکانوں کو بھی خالی کروایا گیا ہے۔

امریکی ریاست ایریزونا سمیت مغربی ریاستیں ان دنوں شدید گرمی کی لیپٹ میں ہیں۔

برطانوی خبر رساں ادارے رائٹرز کے مطابق امریکہ کے وائلڈ لینڈ فائر ایوی ایشن نے اپنے بیان میں آگ بجھانے کے عمل میں مصروف اُنیس فائر فائیٹرز کی ہلاکت کی تصدیق کی ہے۔

بیان میں ہلاک ہونے والے فائر فائٹرز کے خاندانوں اور دوستوں کے لیے دعا کرنے کا بھی کہا گیا ہے۔

نامہ نگار کا کہنا ہے کہ امریکہ میں نائن الیون کے حملوں کے بعد کسی ایک واقعہ میں ہلاک ہونے والے فائر فائٹرز کی یہ سب سے زیادہ تعداد ہے۔

امریکہ کے وائلڈ لینڈ فائر ایوی ایشن نے تصدیق کی ہے کہ یارنل ہلز پر لگنے والی آگ بجھانے میں مصروف انیس فائر فائٹرز ہلاک ہو گئے ہیں۔

حکام کا کہنا ہے کہ ہلاک ہونے فائر فائٹرز کا تعلق آگ بجھانے کے خصوصی یونٹ سے تھا اور انھوں نے نیو میکسیکو اور ایریزونا میں حالیہ ہفتوں لگنے والی آگ پر قابو پانے میں حصہ لیا تھا۔

چیف فائر افیسر ڈین فریجیوکے مطابق’ آگ میں پھنسنے کے بعد انہیں ہنگامی خمیہ نما شیلڈ بھیجنے کا کہا گیا اور اس کے بعد کچھ بہت اچانک ہو گیا۔‘

امریکہ کے بعض علاقوں میں معمول سے زیادہ گرمی پڑنے سے توقع ہے کہ درجہ حرارت 54 ڈگری تک پہنچ جائے گا۔

اسی بارے میں