چار ہزار سال قدیم تاریخی اہرام مسمار

Image caption دارالحکومت کے قریب واقع آثار قدیمہ کے علاقے میں بارہ تاریخی اہرام ہیں

لاطینی امریکہ کے ملک پیرو میں دارالحکومت لیما کے قریب واقع تاریخی علاقے میں کھدائی کے دوران تقریباً چار ہزار سال پرانا اہرام تباہ ہو گیا ہے۔

دارالحکومت لیما کے قریب مسمار ہونے والا اہرام ’اِل پارئیسکو‘ بارہ تاریخی اہراموں میں سے ایک ہے۔

حکام نے بتایا کے تباہ ہونے والا اہرام بیس فٹ بلند تھا۔

پیرو کی وزارت ثقافت کے نائب وزیر نے بتایا کہ اہرام کو گزشتہ ہفتے اُس وقت تباہ کیا گیا جب کمپنی کے تین ملازم بھاری مشینوں کی مدد سے تین دوسرے اہراموں کو تباہ کرنے کی کوشش کر رہے تھے لیکن دیگر تین اہراموں کو مسمار ہونے سے بچا لیا گیا ہے۔

انھوں نے بتایا کہ دو تعمیراتی کمپنیوں کے خلاف مجرمانہ شکایات درج کر لی گئی ہیں اور ان کے خلاف مجرمانہ کارروائی کی جائے گی۔

دوسری جانب ماہرین آثار قدیمہ نے اس واقعے کو ناقابلِ تلافی نقصان قرار دیا ہے۔

آثار قدیمہ کے علاقے اِل پارئیسکو میں کھدائی کے منصوبے کے ڈائریکٹر نے امریکی خبر رساں ادارے اے پی کو بتایا ’اہرام کو مسمار کرنے والوں نے پیرو کی تاریخ کو ناقابل تلافی نقصان پہنچایا ہے۔ ہمیں نہیں معلوم کے انھیں کیسے بنایا گیا تھا ان کی تعمیر میں کیا استعمال کیا گیا‘۔

پیرو کے وزارت سیاحت کے مطابق کولمبیں تہذیب سے کئی سا قبل یہ علاقہ مذہبی اور انتظامی مرکز تھا۔

اسی بارے میں