نائجیریا:سکول پر حملہ، انتیس افراد ہلاک

Image caption جس علاقے میں سکول پر حملہ کیا گیا ہے وہاں شدت پسند تنظیم بوکو حرام سرگرم ہے

نائجیریا میں اطلاعات کے مطابق مشتبہ شدت پسندوں کے ایک سکول پر حملے کے نتیجے میں ایک ٹیچر اور طالب علموں سمیت انتیس افراد ہلاک ہو گئے ہیں۔

نائجیریا کے شمال مشرقی علاقے ماموڈو میں واقع سکول پر شدت پسندوں نے حملہ کیا اور اس واقعے کے عینی شاہدین کے مطابق حملے میں کئی افرد جھلس کر ہلاک ہوئے۔

نائجیریا میں سال دو ہزار دس سے شدت پسندوں کے حملوں میں درجنوں سکول تباہ ہو چکے ہیں۔ یوبے ان تین ریاستوں میں سے ایک ہے جہاں رواں سال مئی میں صدر گڈلک جوناتھن نے ایمرجنسی لگا کر ہزاروں سکیورٹی اہلکاروں کو شدت پسندوں کے خلاف کارروائی کے لیے بھیجا تھا۔

امریکی خبر رساں ادارے اے پی کے ایک نامہ نگار کے مطابق جائے وقوعہ سے قریب ایک ہسپتال میں خوفناک مناظر دیکھنے میں آئے جہاں غم سے نڈھال والدین گولیوں سے چھلنی اور مسخ شدہ لاشوں میں اپنے بچوں کو شناخت کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔

نائجیریا میں 2010 پرتشدد واقعات میں ابھی تک 2000 افراد ہلاک ہو چکے ہیں جن میں سے اکثر واقعات کا الزام بوکوحرام پر لگایا جاتا ہے۔

مئی میں نائجیریا کی فوج نے کہا تھا کہ ملک کے شمال مغرب میں فوجی آپریشن کی وجہ سے بوکو حرام شدت پسندوں کو شدید نقصان پہنچا ہے اور وہ بڑی تعداد میں علاقہ چھوڑ رہے ہیں۔

اسی بارے میں