سپین: انسانی سمگلنگ میں ملوث گروہ گرفتار

Image caption پولیس کے مطابق ان افراد سے مختلف ممالک کے اکاسی پارسپورٹ قبصے میں لیے گئے ہیں

یورپ میں پولیس نے انسانی سمگلنگ میں ملوث درجنوں مشتبہ افراد کو گرفتار کیا ہے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ یہ گروہ چینی مہاجرین کو یورپ اور امریکہ سمگل کرتے ہیں۔

اطلاعات کے مطابق گرفتار ہونے والوں میں اس گروہ کے سربراہان بھی شامل ہیں۔

پولیس کے مطابق ان افراد سے مختلف ممالک کے اکاسی پاسپورٹ قبصے میں لیے گئے ہیں۔

برطانیہ میں انسانی سمگلنگ میں اضافہ

امریکی سرحدی محافظ انسانی سمگلنگ کےمجرم

پولیس نے بتایا کہ یہ گروہ ہر شخص سے چالیس ہزار یوروز وصول کرتا تھا۔

یہ گروہ مہاجرین کو سرحدوں پر اپنی موجودگی ظاہر ہونے سے بچانے کے بارے میں ہدایات بھی دیتا تھا۔

سپین کی پولیس جس نے دو سال قبل انسانی سمگلنگ میں ملوث افراد کے خلاف تحقیقات کا آغاز کیا تھا بتایا کہ اکاون افراد کو سپین جبکہ چوبیس کو فرانس سے حراست میں لیا گیا ہے۔

پولیس فورس کا کہنا ہے کہ ان گروپوں کی سرگرمیوں سے مہاجرین کا استحصال بھی ہوا ہے۔

بی بی سی کے ورلڈ افیئرز کے نامہ نگار مائیک وولرج کا کہنا ہے کہ یورپی یونین اور امریکہ نے اس بات کو تسلیم کیا ہے کہ سپین میں انسانی سمگلنگ کی صورتِ حال ایک بڑھتا ہوا مسئلہ ہے۔

نامہ نگار کے مطابق سپین کی حکومت ان افراد کے خلاف کارروائی کرتی رہتی ہے۔

اسی بارے میں