روس: ہسپتال میں آگ لگنے سے 37 افراد ہلاک

Image caption روس میں حالیہ برسوں میں کئی سرکاری عمارتوں میں آگ بھڑکنے سے بھاری جانی نقصان ہوا ہے

روس میں حکام کا کہنا ہے کہ شمال مغربی روس میں ذہنی امراض کے ایک ہسپتال میں آگ لگنے سے 37 افراد ہلاک ہو گئے ہیں۔

یہ آگ نووگوروڈ کے گاؤں لوکا میں لگی۔ لکڑی سے بنے اس ہسپتال میں 60 کے قریب افراد موجود تھے۔

روس: ہسپتال میں آگ بھڑک اٹھنے سے درجنوں ہلاک

روسی میڈیا کی اطلاع کے مطابق ہلاک ہونے والوں میں ایک نرس بھی شامل ہے جس نے مریضوں کو ہسپتال سے نکالنے کی کوشش کی تھی۔ اب تک ملبے سے 15 لاشیں نکالی جا چکی ہیں۔

آگ مقامی وقت کے مطابق جمعرات کو صبح تین بجے لگی۔ ممکنہ طور پر آگ شروع ہونے کا باعث ایک مریض تھا جو تمباکو نوشی کر رہا تھا۔

اس سے قبل حکام نے حفاظتی خدشات کے پیشِ نظر اس عمارت کو بند کرنے کا حکم دیا تھا۔

ہنگامی امور کی وزارت نے کہا ہے کہ آگ مردانہ وارڈ میں شروع ہوئی اور تیزی سے ایک منزلہ ہسپتال میں پھیل گئی۔ ٹیلی ویژن پر نشر ہونے والی تصاویر میں جلی ہوئی عمارت دکھائی گئی ہے۔

علاقے کے گورنر سرگئی میتن نے روس کے خبررساں ادارے انٹرفیکس کو بتایا: ’طبی عملے نے ایک مریض کو شعلوں میں لپٹا ہوا دیکھا۔ ممکن ہے کہ وہ بستر میں لیٹے لیٹے تمباکو نوشی کر رہا ہو اور گدے نے آگ پکڑ لی ہو۔‘

انھوں نے مزید کہا کہ ہسپتال میں شدید بیمار مریض داخل تھے۔

20 افراد کو زندہ بچا لیا گیا ہے۔ آگ اب بجھ گئی ہے اور سینکڑوں امدادی کارکن قریبی جنگل میں ان مریضوں کو ڈھونڈ رہے ہیں جو ممکنہ طور پر آگ سے بچنے کے لیے بھاگ کر وہاں چلے گئے ہوں۔

پولیس نے تفتیش شروع کر دی ہے۔

حالیہ برسوں میں روس بھر میں کئی سرکاری عمارتوں میں آگ کے باعث بھاری جانی نقصان ہوا ہے۔

اسی سال اپریل میں ماسکو کے قریب ایک اور ذہنی امراض کے ہسپتال میں آگ بھڑک اٹھنے سے 38 افراد ہلاک ہو گئے تھے۔

اسی بارے میں