’اسلام دہشتگردی کی اجازت ہرگز نہیں دیتا‘

Image caption مفتیِ اعظم کا کہنا تھا کہ مسلمانوں کو امن پسندی کا مظاہرہ کرنا چاہیے

مفتیِ اعظم شیخ عبد العزیز نے خطبہ حج میں کہا ہے کہ اسلام نے امن کی تعلیم دی ہے اور اسلام دہشت گردی کی اجازت نہیں دیتا۔

شیخ عبدالعزیز نے خطبے میں کہا کہ کسی انسان کا ناحق خون کرنے والے کا ٹھکانہ جہنم ہے اور اسلام دہشت گردی کی ہرگز اجازت نہیں دیتا۔

حج کے مناظر

’آج دنیا بھر میں ہونے والی دہشت گردی کی اسلام مذمت کرتا ہے اور مسلمانوں کو امن پسندی کا مظاہرہ کرنا چاہیے۔‘

مفتیِ اعظم نے کہا کہ مسلمانوں پر جو مصائب آتے ہیں ان پر صبر کرنا چاہیے اور یہی اسلام کی تعلیم ہے۔

’آج امت مشکل دور سے گذر رہی ہے۔ اسلامی ممالک کے سربراہان عوام کی خیرخواہی اور آسانیاں پیدا کریں۔ حکمران عوام کی مشکلات کو حل کرنے کیلیے اقدامات کریں جبکہ علما کو چاہیے کہ تقویٰ اور اخلاص کو اختیار کریں۔‘

انہوں نے کہا کہ شریعت کو نافذ کرنے سے کامیابی قدم چومے گی۔

مفتیِ اعظم نے کہا کہ اگر اسلام کےاقتصادی نظام کو اپنایا جائے تو دنیا سے معاشی بحران ختم ہوجائیں گے۔

گذشتہ روز اتوار کو حجاج کرام مقدس شہر مکہ سے منیٰ پہنچے جہاں پر انہوں نے رات بھر قیام کیا۔

اس سال بھی سعودی حکام نے عازمین کی سکیورٹی کے لیے خصوصی انتظامات کیے ہیں۔

سعودی وزیر داخلہ پرنس محمد بن نیف کا کہنا تھا کہ اس سال بیرون ملک کے حجاج کرام کی کل تعداد تقریباً تیرہ لاکھ اناسی ہزار ہے جبکہ یہ تعداد گزشتہ سال ساڑھے سترہ لاکھ تھی۔

سعودی وزیرِ صحت کے وزیر عبداللہ الرابعہ نے سنیچر کو میڈیا کے نمائندوں کو بتایا تھا کہ ابھی تک حجاج کرام میں ایم ای آر ایس وائرس کا کوئی کیس سامنے نہیں آیا۔

واضح رہے کہ اس وائرس سے دنیا بھر میں 60 افراد ہلاک ہوئے ہیں جن میں سے سعودی عرب میں 51 افراد کی ہلاکت ہوئی۔

سعودی حکام نے صحرائی علاقوں سے غیر قانونی راستوں کے ذریعے مکہ مکرمہ آنے والے حاجیوں کو روکنے کے اقدامات میں تیزی پیدا کردی ہے۔

اسی بارے میں