’بکنگھم پیلس میں چاقو بردار شخص گرفتار‘

Image caption بکنگھم پیلس کے قریب سے حالیہ دنوں میں یہ دوسرے شخص گرفتار ہوئے ہیں

برطانوی پولیس کے مطابق لندن میں برطانوی شاہی خاندان کی رہائش گاہ بکنگھم پیلس کے باہر سے ایک چوالیس سالہ شخص کو چاقو سمیت گرفتار کیا گیا ہے۔

سکاٹ لینڈ یارڈ کے مطابق اس شخص نے محل کے شمالی دروازے سے اندر داخل ہونے کی کوشش کی مگر اسے فوراً وہیں روک لیا گیا۔

اس شخص کو بغیر اجازت کے ایک زیرِ حفاظت عمارت میں داخلے اور چاقو رکھنے کے جرم میں گرفتار کیا گیا اور انہیں لندن کے ایک پولیس سٹیشن لےجایا گیا۔

بکنگھم پیلس کے حکام نے بتایا ہے کہ ملکہ اس وقت محل میں موجود نہیں تھیں اور اس پر مزید تبصرہ کرنے سے انکار کر دیا۔

پولیس کا کہنا ہے کہ انہوں نے یہ چاقو اس شخص کی تلاشی کے دوران برآمد کیا اور یہ کہ اس واقعے میں کوئی زخمی نہیں ہوا۔

محل کا شمالی دروازہ محل کے ان دروازوں میں سے ہے جو روز مرہ استعمال میں رہتے ہیں۔

اس واقعے سے قبل گزشتہ مہینے ایک شخص کو محل میں چوری کرنے کے شبے، دراندازی اور مجرمانہ توڑ پھوڑ کے الزامات میں گرفتار کیا گیا تھا۔ یہ شخص بکنگھم محل کی باڑ پھلانگ کر اندر داخل ہوا تھا۔

ایک اور شخص محل کے باہر سے گرفتار کیا گیا تھا جس پر اس چوری میں مدد دینے کا الزام تھا۔

یہ دونوں افراد اس وقت ضمانت پر ہیں۔

محل میں در اندازی کے کئی مشہور واقعات رہے ہیں جن میں سب سے مشہور مائیک فیگن کا 1982 میں در اندازی کا واقعہ ہے جو ملکہ کی خوابگاہ میں داخل ہو گئے تھے۔

ملکہ کو جاگنے پر پتہ چلا کہ ان کے کمرے میں کوئی موجود ہے اور انہوں نے اطلاعات کے مطابق مائیکل فیگن سے ایک گھنٹے تک گفتگو کی جس کے بعد انہیں گرفتار کر لیا گیا۔

اسی بارے میں