دس چیزیں جن سے ہم گذشتہ ہفتے لاعلم تھے

تصویر کے کاپی رائٹ spl
Image caption کان اور ناک کے بارے میں مختلف شواہد

آلودگی پیما کے طور پر چرک گوش یا کانوں کے میل کا استعمال کیا جا سکتا ہے۔

مزید معلومات کے لیے کلک کریں

کلاریسا ڈکسن رائٹ کا پورا نام کلاریسا تھریسا فلومینا آئیلین میری جوسفین اینگیس ایلسی ٹرلبی ایسمیرالڈا ڈکسن رائٹ تھا۔

مزید معلومات کے لیے پڑھیں (ڈیلی ٹیلیگراف)

سمندری مچھلی نروھل کی لمبا بلدار دانت جو اظہار عشق کے لیے استعمال ہوتا ہے انتہائی حساس ہوتا ہے۔

مزید معلومات کے لیے کلک کریں

ایوننگ سٹینڈرڈ کے مالک ایوجینی لیویدیو نے اپنے آفس کی ذاتی لائبریری میں 500 مختلف قسم کی خوشبوئیں رکھتے ہیں۔

مزید معلومات کے لیے پڑھیں (گارڈین)

کوے جو انجانے میں کوئل کے بچوں کو اپنے گھونسلوں میں پالتے ہیں ان کے بچنے کی شرح بہتر ہے۔

مزید معلومات کے لیے پڑھیں (دا ٹائمز)

تصویر کے کاپی رائٹ GETTY IMAGES
Image caption یہ تصور غلط قرار پایا ہے کہ انسانی ناک صرف دس ہزار بو میں امتیاز کر سکتی ہے

گنیز سنہ 1982 میں مغربی لندن میں کشید کی جانے والی انگلش بیئرکو اپنے برانڈ نام سے لانچ کرنے کے قریب تھی۔

مزید معلومات کے لیے پڑھیں (اکونومسٹ)

عام خیال ہے کہ انسانی ناک دس ہزار بو کو پہچان سکتی ہے۔ یہ تصور غلط ہے کیونکہ انسان کھربوں طرح کی بو میں تمیز کر سکتی ہے۔

مزید معلومات کے لیے پڑھیں (سمتھسونین)

برطانیہ میں اپنے کام سے مطمئن لوگوں میں پادریوں کی سب سے زیادہ شرح ہے۔

مزید معلومات کے لیے کلک کریں

اس ہفتے سے قبل تک برطانیہ میں کسی کی زمین پر بھوری گلہری کے دیکھے جانے کی رپورٹ نہ کرنا ایک جرم تھا۔

مزید معلومات کے لیے پڑھیں (ڈیلی میل)

گہررنگ کے چاکلیٹ کی وجہ سے جلن کم کرنے والے مرکبات تیار ہوئے۔

مزید معلومات کے لیے پڑھیں (نیویارک ڈیلی نیوز)

اسی بارے میں