بالی:غلط ہائی جیکنگ الرٹ کے بعد مسافر گرفتار

تصویر کے کاپی رائٹ GETTY
Image caption میٹ کرسٹوفر نامی مسافر نے نشے کی حالت میں اشتعال انگیزی کا مظاہرہ کیا

انڈونیشیا کے شہر بالی میں دورانِ پرواز ہائی جیکنگ کے غلط سگنل کی وجہ بننے والے آسٹریلوی مسافر کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔

یہ واقعہ اس وقت پیش آیا جب آسٹریلیا کے شہر برزبین سے بالی جانے والی ورجن ایئرلائنز کی پرواز کے دوران میٹ کرسٹوفر نامی 28 سالہ مسافر نے نشے کی حالت میں اشتعال انگیزی کا مظاہرہ کیا اور کاک پِٹ کے دروازے کو جارحانہ انداز سے کھٹکھٹانا شروع کیا۔

اس پر پائلٹ نے لینڈنگ سے ایک گھنٹہ قبل کنٹرول ٹاور کو اغوا کا سگنل بھیج دیا۔

فضائی کمپنی کے مطابق دورانِ پرواز مذکورہ مسافر کو عملے نے ہتھکڑی لگا کر قابو میں کیا۔

اغوا کی اطلاع کے بعد حکام نے بالی ایئرپورٹ کو چند گھنٹوں کے لیے بند کر دیا اور انڈونیشیا کے فوجی دستوں نے رن وے کا کنٹرول سنبھال لیا اور لینڈنگ کے بعد جہاز کے اندر داخل ہوگئےـ

تصویر کے کاپی رائٹ GETTY
Image caption پائلٹ نے لینڈنگ سے ایک گھنٹہ قبل کنٹرول ٹاور کو اغوا کا سگنل بھیج دیا

ایئرپورٹ پر موجود ایک اور طیارے کے مسافر پالانی موہن نامی نے بتایا کہ انھوں نے لینڈنگ کے بعد مذکورہ طیارے کی طرف فوج کی بکتر بند گاڑیوں کو جاتے دیکھاـ

ایئرلائن کے حکام کے مطابق یہ واقعہ طیارے کے عملے میں افراتفری کے بعد پیش آیا اور اغوا کا سگنل غلط اور غیر ضروری تھا۔

ورجن آسٹریلیا سے تعلق رکھنے والے ہیرو سوجامیکو نے کہا کہ ’یہ واقعہ صرف اس لیے پیش آیا کہ مسافر نشے کی حالت میں تھا اور اس نے جارحانہ رویہ اختیار کیا تھا۔‘

ورجن آسٹریلیا کا نام پہلے ورجن بلیو ایئرلائن تھا، اور یہ آسٹریلیا کی دوسری بڑی فضائی کمپنی ہے۔

اسی بارے میں