اشعار سنا کر ریل میں مفت سفر کریں

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption الیگزینڈر پوشکن کو روس کا قومی شاعر اور ملک کی جدید ادب کا بانی سمجھا جاتا ہے

روس کی ریاست سائبیریا کے ایک شہر میں اطلاعات کے مطابق ان مسافروں کو زیرِ زمین چلنے والی میٹرو یا ریل سروس میں مفت سفر کرنے کی پیشکش ہوگی جو روس کے عظیم شاعر الیگزینڈر پوشکن کی کسی بھی نظم کے دو اشعار سنا سکیں۔

ایک مقامی ویب سائٹ sib.fm کے مطابق مسافروں کو شعر سنا کر ریل میں مفت سفر کرنے کی پیشکش نووس بریسک شہر میں چھ جون کو کی جائے گی جو الیگزینڈر کا 215واں یومِ پیدائش ہے۔ ریل میں مفت سفر کی پیشکش ان کی یومِ ولادت منانے کی مناسبت سے ہے۔

روسی زبان اور ادب کے فروغ کے لیے کام کرنی والی ایک غیر سرکاری تنظیم کی کارکن لائودمیلا موناکوا نے کہا کہ اس دن اساتذہ، لائبریریئن، طلبا اور سکول کے بچے نووس بریسک کے ساتھ میٹرو سٹیشنوں کے اندر جانے والوں راستوں میں کھڑے ہونگے جو یہ چیک کریں کہ کیا مسافر اپنے پوشکن کو جانتے ہیں کہ نہیں۔

Image caption لائودمیلا موناکوا کا کہنا تھا کہ میٹرو سٹیشنوں کے اندر بھی مشاعرے منعقد کیے جائیں گے

اس تقریب کا انعقاد کرنے والی لائودمیلا موناکوا کا کہنا ہے کہ میٹرو سٹیشنوں کے اندر بھی مشاعرے منعقد کیے جائیں گے۔

الیگزینڈر پوشکن کو روس کا قومی شاعر اور ملک کی جدید ادب کا بانی سمجھا جاتا ہے۔ ان کی شاعری روس میں نصاب کا مرکزی حصہ ہے۔

ملک میں بہت سی لائبریریاں اور گلیاں الیگزینڈر پوشکن کے نام پر ہیں اور نووس بریسک میں بھی کئی مقامات ان کے نام سے منسوب کیے گئے ہیں۔