توپ چاہیے یا تفنگ، علی بابا پر سب دستیاب!

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption علی بابا کے نیویارک سٹاک ایکسچینج میں درج ہونے کی خوشی مناتے کمپنی کے مالک جیک ما جو چین کے امیرترین لوگوں میں شمار کیے جاتے ہیں

چین کی آن لائن شاپنگ کمپنی علی بابا نے اپنے آئی پی او یعنی شروعاتی عوامی پیشکش سے سرمایہ کاروں کو ایک ہی دن میں مالا مال کر دیا ہے۔

نیویارک سٹاک ایکسچینج میں اس کا شیئر 40 فیصد کے زبردست پریمیم پر درج کیا گیا۔

علی بابا امریکہ کی سلیکون ویلی سے کاروبار کرتی ہے اور دوسری آن لائن ريٹیل (خردہ) کمپنیوں کی ہی طرح اس کا زور خردہ خريداروں پر نہ ہو کر بڑے کاروباریوں پر رہتا ہے۔

مبصرین کا کہنا ہے کہ نیویارک سٹاک ایکسچینج میں شامل ہونے کے بعد علی بابا کا نام بھی فیس بک، ایمیزون اور ای بے جیسی کمپنیوں کے ساتھ لیا جا سکتا ہے۔

یہاں ذہن میں یہ سوال ابھر سکتا ہے کہ آخر علی بابا پر کیا کیا دستیاب ہے تو جواب کچھ اس طرح دیا جاتا ہے وہاں کیا دستیاب نہیں؟

یہ کمپنی آن لائن مارکٹنگ، آن لائن خدمات اور لاجسٹکس تو مہیا کراتی ہی ہے اس کے علاوہ یہ بہت سی دوسری چیزیں بھی فراہم کراتی ہے جس کا مختصرا ذکر یہاں کیا جارہا ہے۔

یہاں فوجی سازو سامان آپ کو اپنی طرف متوجہ کرتا ہے۔ اگر کوئی ٹینک، توپ، گولہ، راکٹ لانچر خریدنے کی حسرت رکھتا ہو تو اس کے لیے بھی علی بابا حاضر ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ ALIBABA
Image caption اس قسم کے ٹینک کی فراہمی بھی علی بابا کے یہاں سے ہو سکتی ہے

اس آن لائن پلیٹ فارم پر ایک اصلی فوجی ٹینک ایک لاکھ 90 ہزار ڈالر میں دستیاب ہے۔

صرف ٹینک ہی نہیں دیگر فوجی سازو سامان بھی علی بابا آپ کو فراہم کرا سکتا ہے۔

توپ و تفنگ کے شوقین حضرات کے لیے یہ خبر بھی دلچسپی سے خالی نہیں کہ کم خرچ میں اصلی ٹینک اور راکٹ لانچروں کی نقل بھی ملتی ہے۔

اگر آپ ہوائی جہاز خریدنے کی حسرت رکھتے ہیں تو علی بابا آپ کو وہ بھی فراہم کرا سکتا ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ ALIBABA
Image caption اگر گلائڈر میں دلچسپی ہے تو آرڈر دے سکتے ہیں

سنہ 1983 میں بننے والا سوویت کارگو طیارہ اس کی ویب سائٹ پر دستیاب تھا۔

اگر آپ بوٹ گلائڈ یا گلائڈنگ بوٹ یا ایئرشپ حاصل کرنا چاہتے ہیں تو اس کی قیمت دیکھ کر آپ اسے علی بابا سے منگوا سکتے ہیں۔

علی بابا پر تلا ہوا انڈا بھی دستیاب ہے اور وہ بھی مخصوص شکلوں میں۔ آپ چاہیں تو مخصوص مذکورہ شکل میں ہاف فرائڈ بیضہ بھی حاصل کر سکتے ہیں۔

اگر آپ کو اپنے پالتو جانور کے لیے تابوت چاہیے تو پریشان ہونے یا بہت سر کھپانے کی ضرورت نہیں، علی بابا ہے نا مانو اس کے پاس دنیا بھر کے خزانے کی چابی کھل جا سم سم ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption علی بابا جب 1999 میں وجود میں آئی تو اس وقت اس میں 18 لوگ کام کرتے تھے لیکن اب دنیا بھر میں اس کے لئے 22 ہزار افراد کام کرتے ہیں

سنہ 1999 میں جیک ما نے alibaba.com کے نام سے اپنا بزنس شروع کیا تھا۔ یہ ویب سائٹ چین (اور دیگر ممالک) کے ایکسپورٹرز کو دنیا بھر میں پھیلی 190 کمپنیوں سے جوڑتی ہے۔

بہرحال علی بابا کی ویب سائٹ کا صرف یہی کام نہیں ہے۔ علی بابا taobao.com بھی چلاتی ہے جو چین کی سب سے بڑی شاپنگ ویب سائٹ ہے اور اس کی ایک اور ویب سائٹ tmall.com چین میں ابھرتے ہوئے متوسط طبقے کے لیے برانڈڈ چیزیں مہیا کرتی ہے۔

علی بابا کی پہنچ بس یہیں ختم نہیں ہوتی۔ یہ ایک آن لائن پیمنٹ نظام alipay.com بھی چلاتی ہے جو PayPal کی طرح کام کرتا ہے۔

Image caption علی بابا کمپنی آن لائن مارکٹنگ، آن لائن خدمات اور لاجسٹکس کے علاوہ یہ بہت سی دوسری چیزیں بھی فراہم کراتی ہے

چین میں ٹوئٹر جیسی سوشل میڈیا کی ویب سائٹ سنا وائبو میں بھی اس کی بڑی شراکت داری ہے۔ اس کے ساتھ ہی یو ٹیوب جیسی ویڈیو شیئرنگ ویب سائٹ Youku Tudou میں بھی اس کی حصہ داری ہے۔

علی بابا کو جب 1999 میں شروع کیا گیا تو اس میں 18 لوگ کام کرتے تھے لیکن اب دنیا بھر میں اس کے لیے 22 ہزار افراد کام کرتے ہیں اور انٹرنیٹ سے ہونے والے کاروبار کے ایک بڑے حصے پر اس کا کنٹرول ہے۔

اسی بارے میں