اجنبی وائٹ ہاؤس کے کئی حصوں تک گھس گیا تھا

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption جس وقت یہ شخص وائٹ ہاؤس میں داخل ہوا اس وقت صدر اوباما اور ان کا خاندان وہاں نہیں تھا

امریکی میڈیا کے مطابق رواں ماہ جس شخص کو وائٹ ہاؤس میں بغیر اجازت داخل ہونے پر گرفتار کیاگیا تھا اسے عمارت کے اُس سے کہیں زیادہ حصوں تک رسائی حاصل ہو گئی تھی جتنا کہ پہلے بتایا گیا تھا۔

وائٹ ہاؤس کے اہلکاروں نے خبر رساں اداروں کو بتایا کہ 42سالہ عمر گونزالس 19 ستمبر کو وائٹ ہاؤس کے مشرقی کمرے تک پہنچ گئے تھے جہاں سخت سکیورٹی ہوتی ہے۔

اس سے پہلے کہا گیا تھا کہ انھیں مشرقی داخلی دروازوں کے قریب ہی روک لیا گیا تھا جب وہ عمارت کی مرکزی باڑ عبور کر کے اندر آئے۔

خفیہ سروس کی سربراہ سے اس بابت منگل کو پوچھ گچھ کی جائے گی۔ امریکی حکام خفیہ سروسز کی ڈائریکٹر جولیا پائرسن سے اس کوتاہی کے حوالے سے وضاحت طلب کریں گے۔

ایک نامعلوم اہلکار نے واشنگٹن پوسٹ کو بتایا کہ گونزالس ایک چاقو سے مسلح تھے اور اس سے پہلے کے حکام انھیں قابو کرتے وہ وائٹ ہاؤس کا دروازہ عبور کرنے کے بعد دوڑتے ہوئے مشرقی کمرے میں جا پہنچے۔

یہ طویل اور پرتعیش انداز میں سجا ہوا کمرہ عموماً صدارتی خطابات اور رسمی تقریبات کے لیے استعمال کیا جاتا ہے۔

امریکہ کی خفیہ ایجنسی امریکی صدر براک اوباما کی سکیورٹی کی ذمہ دار ہے اور تاحال اس کی جانب سے اس واقعے پر کوئی بیان نہیں دیا گیا۔

اس واقعے کے بعد وائٹ ہاؤس کی حفاظت پر مامور ایجنسی نے اپنے تمام طریقہ کار کا جائزہ لیا ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ none
Image caption واقعے کے بعد وائٹ ہاؤس کی حفاظت پر مامور ایجنسی نے اپنے تمام طریقہ کار کا جائزہ لیا گیا ہے

مسٹر گونزالس پر ممنوعہ عمارت میں بلا اجازت داخل ہونے اور ہتھیار رکھنے کے الزامات عائد کیے گئے ہیں۔

حکام کب گونزالس کی گاڑی سے دو بندوقیں، چار دستی بم، اور دیگر آتش گیر مادہ اور بارودی مواد ملا۔ ان کے ساتھ وائٹ ہاؤس کا نقشہ تھا جس میں مختلف مقامات کی نشاندہی کی گئی تھی۔

قانون نافذ کرنے والے ادارے ایک اہلکار نے امریکی خبر رساں ادارے ایسوسی ایٹڈ پریس کو بتایا خفیہ ایجسنی سے اہلکاروں نے گونزالس کا موسم گرما کے دوران دو مرتبہ انٹرویو کیا تھا اور یہ قرار دیا تھا یہ شخص سلامتی کے لیے کوئی خطرہ نہیں ہے۔

یاد رہے کہ جس وقت یہ شخص وائٹ ہاؤس میں داخل ہوا اس وقت صدر اوباما اور ان کا خاندان وہاں نہیں تھا وہ دس منٹ قبل ہی ہیلی کاپٹر پر وہاں سے روانہ ہوئے تھے۔

اسی بارے میں