کینیڈا: ’حملہ آور کا دولتِ اسلامیہ سے تعلق نہیں‘

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption مسلح حملہ آور کو سکیورٹی فورسز نے فائرنگ کر کے ہلاک کر دیا تھا

کینیڈا کی حکومت کے مطابق دارالحکومت آٹوا میں فائرنگ کرنے والے حملہ آور کے اسلامی شدت پسند تنظیم دولتِ اسلامیہ سے تعلق کے شواہد نہیں ملے ہیں۔

کینیڈا کے وزیر خارجہ جان بیئرڈ نے بی بی سی سے بات کرتے ہوئے کہا کہ مائیکل زیہاف بیبو’ بلاشبہ شدت پسند‘ تھا تاہم یہ خطرناک افراد کی فہرست میں شامل نہیں تھا۔

مائیکل زیہاف بیبو نے دارالحکومت آٹوا میں جنگی یادگار پر فائرنگ کر کے ایک فوجی کو ہلاک کر دیا تھا اور اس کے بعد پارلیمان پر دھاوا بول دیا تھا جہاں انھیں فائرنگ کر کے ہلاک کر دیا گیا تھا۔

پولیس نے فائرنگ کے واقعے کی ویڈیو بھی جاری کر دی ہے۔

جان بیئرڈ نے بی بی سی سے بات کرتے ہوئے کہا کہ ابھی تک قابل ذکر شواہد نہیں ملے جن سے معلوم ہو کہ مائیکل زیہاف بیبو کا تعلق دولتِ اسلامیہ سے تھا۔

وزیر خارجہ کے مطابق کینیڈا کے ان شہریوں کی شدت پسندی کی جانب مائل ہونے پر انھیں بے حد تشویش ہے جو شام اور عراق میں لڑ رہے ہیں تاہم ’اس وقت ہمارے پاس ان دو حملہ آوروں کا تعلق ان سے جوڑنے کے شواہد موجود نہیں ہیں۔‘

اطلاعات کے مطابق اس وقت مشرق وسطیٰ میں ایک سو کے قریب کینیڈین شہری جہاد کرنے گئے ہیں اور یہ کینیڈین حکومت کے لیے لمحۂ فکریہ ہے۔

انھوں نے مزید کہا کہ مائیکل زیہاف بیبو اس سے کہیں زیادہ نقصان پہنچا سکتے تھے جتنا انھوں نے پہنچایا۔

دوسری جانب یہ بات بھی سامنے آئی ہے کہ بدھ کو پارلیمان پر حملے کے دوران کینیڈا کے وزیراعظم سٹیون ہارپر پارلیمان میں 15 منٹ کے لیے چھپ گئے تھے۔

تصویر کے کاپی رائٹ EPA
Image caption کینیڈا میں اس واقعے پر گہرے صدمے اور افسوس کا اظہار کیا جا رہا ہے

وزیراعظم نے ٹیلی ویژن پر خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کینیڈا حالیہ حملوں سے خوفزدہ نہیں ہو گا اور ملک میں بربریت کا مظاہرہ کرنے والے افراد کے خلاف کوششوں کو تیز کیا جائے گا۔

اس سے قبل بدھ کو آٹوا میں ایک مسلح شخص نے قومی یادگار کی حفاظت پر مامور ایک فوجی کو ہلاک کر دیا تھا اور قریب موجود پارلیمنٹ کی عمارت میں گھس گیا جہاں پولیس نے اس کا پیچھا کیا۔ حملہ آور پولیس کی فائرنگ سے ہلاک ہو گیا۔

یہ واقعہ کینیڈا کی حکومت کی طرف سے ’ٹیرر تھریٹ‘ یعنی دہشت گردی کے خطرے کو کم سے درمیانہ درجے تک بڑھانے کے تھوڑی ہی دیر بعد پیش آیا۔

اسی بارے میں