’آپ ہمیں شراب دیں، ہم آپ کو آرٹ دیں گے‘

تصویر کے کاپی رائٹ PA
Image caption ’کیا آپ شراب کو آرٹ سے بہتر سمجھتے ہیں؟‘

روس کے شہر سینٹ پٹرزبرگ میں مصوری کی ایک منفرد نمائش ہو ر ہی جہاں پر مصور اپنی پینٹنگز شراب کے بدلے میں فروخت کریں گے۔

13 فروری کو شروع ہونے والی اس نمائش کے منتظمین کا کہنا ہے کہ یہ ان لوگوں کے لیے ہو رہی ہے جو آرٹ سے عشق کرتے ہیں۔

نمائش کے سوشل میڈیا کے صفحات پر منتظمین نے اس کو کچھ اس طرح بیان کیا ’کیا آپ شراب کو آرٹ سے بہتر سمجھتے ہیں؟ کیا آپ شراب پر آرٹ سے زیادہ پیسے خرچتے ہیں؟ تو پھر سب کچھ چھوڑ دیں اور ہمارے پاس آئیں۔ ہمیں اپنی شراب دیں اور ہم آپ کو اپنی آرٹ دیں گے!‘

نمائش کے اس انوکھے انداز کو سوشل میڈیا پر تنقید کا سامنا بھی ہوا ہے۔

کچھ لوگوں کا کہنا تھا کہ یہ شراب اور نشے کو فروغ دے گا لیکن منتظمین کا اصرار ہے کہ وہ محض ایک پرانی روایت کو اجاگر کر رہے ہیں جس کو پیکاسو جیسے مشہور مصوروں نے بھی استعمال کیا تھا۔

یہ نمائش اٹھارہ برس کی عمر سے زائد افراد کے لیے ہے جو روس میں شراب پینے کی قانونی عمر ہے۔

اسی بارے میں