سعودی عرب میں سکیورٹی الرٹ پر امریکی سفارت خانہ بند

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption بیان میں دہشت گرد تنظیم یا دہشت گردوں کے بارے میں مزید تفصیل نہیں بتائی گئی ہے

سعودی عرب میں امریکی سفارت خانے نے سکیورٹی خدشات کے پیش نظر دو دن کے لیے اپنی قونصلر خدمات بند کرنے کا اعلان کیا ہے۔

امریکی سفارت خانے کی جانب سے جاری ہونے والے ایک بیان کے مطابق دارالحکومت ریاض، جدا اور ظہران میں قونصلر خدمات اتوار اور پیر کو بند رہیں گی۔

بیان میں سعودی عرب میں مقیم اپنے شہریوں کو اضافی احتیاط برتنے اور اپنی کو نمایاں نہ کرنے کی ہدایت کی ہے۔

جمعے کو امریکی سفارت خانے نے خبردار کیا تھا کہ دہشت گرد تیل کے شعبے میں کام کرنے والے مغربی شہریوں پر حملے کر سکتے ہیں۔

بیان کے مطابق’ اس کے پاس معلومات ہیں کہ ایک دہشت گرد تنظیم سے منسلک افراد تیل سے مالا مال مشرقی صوبے میں لوگوں کو ٹارگٹ کر سکتے ہیں۔‘

بیان میں دہشت گرد تنظیم یا دہشت گردوں کے بارے میں مزید تفصیل نہیں بتائی گئی ہے تاہم کہا گیا کہ’تمام شہریوں کو مشورہ دیا ہے کہ وہ اپنے اطراف سے ہوشیار رہیں اور ملک میں دورانِ سفر اضافی حفاظتی اقدامات کریں۔‘

امریکی محکمۂ خارجہ نے بھی سعودی عرب میں اپنے شہریوں سکیورٹی الرٹ کے باعث ملک میں غیر ضروری سفر کرنے سے گریز کرنے کی ہدایت کی ہے۔

سعودی عرب میں ماضی میں مغربی شہریوں کو نشانہ بنایا جا چکا ہے۔

سعودی عرب کے کئی شہری شدت پسند دولتِ اسلامیہ میں شامل ہو چکے ہیں اور ان کی ملک میں واپسی کو سکیورٹی رسک قرار دیا جا رہا ہے۔