دارالحکومت بدلنے والے ممالک

تصویر کے کاپی رائٹ Getty

اس وقت دنیا میں آٹھ ایسے ممالک ہیں جو مختلف وجوہات کی بِنا پر اپنے دارالحکومت تبدیل کر چکے ہیں جبکہ مشرقِ وسطیٰ میں شامل ملک مصر بھی اپنے دارالحکومت کی تبدیلی کی منصوبہ بندی کر رہا ہے۔

حکومتِ مصر کے منصوبے کے مطابق موجودہ دارالحکومت قاہرہ کے نواح میں 700 کلومیٹر کے علاقے میں ملک کا نیا انتظامی دارالحکومت قائم کیا جائے گا۔

ابھی دنیا میں آٹھ ایسے ممالک ہیں جنھوں نے اپنے دارالحکومت تبدیل کیے۔

نائجیریا

تصویر کے کاپی رائٹ Getty

افریقی ملک نائجیریا کا شمار ان ممالک میں ہوتا ہے جنھوں نے اپنی انتظامی حکومت کو ملک کے مصروف معاشی مرکز سے دور کیا۔ 1991 میں نائجیریا نے ابوجا کو اپنا دارالحکومت بنایا جبکہ اس سے قبل لاگوس اس کا دارالحکومت تھا۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty

میانمار

تصویر کے کاپی رائٹ Getty

جنوبی مشرقی ایشیائی ملک میانمار کا دوسرا نام برما بھی ہے۔ 2005 میں ملک کی فوجی حکومت نے اس وقت کے دارالحکومت رنگون سے تقریباً 320 کلومیٹر دور نیپیادو کے نام سے ایک نئے دارالحکومت کی بنیاد رکھی تھی۔

اگرچہ یہ خیال بھی ظاہر کیا جاتا ہے کہ دارالحکومت کو تبدیل کرنے کی وجہ ایک نجومی کی جانب بیرونی فوج کے حملے سے متعلق کی جانے والی پیش گوئی تھی۔ نیا دارالحکومت نیپیادو جغرافیائی اور سٹریٹیجک لحاظ سےزیادہ اہم جگہ واقع ہے۔

روس

تصویر کے کاپی رائٹ Getty

سینٹ پیٹرزبرگ 1712 سے لے کر 1918 تک یعنی تقریباً دو صدیوں تک روس کا دارالحکومت رہا۔ اس شہر کو 1703 میں پیٹر دی گریٹ نے قائم کیا تھا۔ 1918 سے اب تک ماسکو کو روسی دارالحکومت کا درجہ حاصل ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty

برازیل

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service

لاطینی امریکہ کے ملک برازیل نے 1950 میں اپنے دارالحکومت کو تبدیل کیا۔ اس سے قبل ریو ڈی جنیرو برازیل کا دارالحکومت تھا جبکہ پچھلے 65 سالوں سے برازیلا کے پاس یہ حیثیت ہے۔ اس مرکزی شہر کو اسی مقصد کے لیے قائم کیا گیا تھا کہ یہاں مشہور عوامی عمارتیں قائم ہیں جنھیں جدید آرکیٹیکچر کے بانی نئیرمائیر نے تیار کیا تھا۔ اس شہر کا باضابطہ افتتاح 1960 میں ہوا تھا۔

پاکستان

تصویر کے کاپی رائٹ Hulton Archive

جنوب مشرقی ایشا کے ملک پاکستان کا موجودہ دارالحکومت اسلام آباد ہے۔ تاہم 1947 میں جب برصغیر تقسیم ہوا تو ملک کے بانی محمد علی جناح کی جائے پیدائش اور آبادی کے لحاظ سے سب سے بڑا شہر کراچی پاکستان کا دارالحکومت بنا۔ 1960 میں فوجی صدر ایوب خان نے دارالحکومت کو صوبہ سندھ سے اسلام آباد منتقل کر دیا۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP

قزاقستان

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
تصویر کے کاپی رائٹ Getty

ماضی قریب میں کسی ملک کے تبدیل ہونے والے دارالحکومت میں سے ایک نام قزاقستان کا بھی ہے۔ 1997 میں الماتی کی بجائے آستانہ کو دارالحکومت کا درجہ ملا۔ الماتی اب بھی ملک کا صنعتی مرکز اور سب سے زیادہ گنجان آباد شہر ہے۔

تنزانیہ

تصویر کے کاپی رائٹ Getty

امریکی ماہرِ تعمیرات جیمز روسنٹ نے 1980 کی دہائی میں تنزانیہ کے نئے دارالحکومت دودوما کا منصوبہ مکمل کیا۔ لیکن نقل مکانی یا تبدیلی ہمیشہ پوری طرح کامیاب نہیں ہوتی۔ آج تنزانیہ کی قومی اسمبلی کا اجلاس موجودہ دارالحکومت دودوما میں ہوتا ہے تاہم اب بھی ملک کی متعدد وزارتوں کے دفتر اور تمام غیر ملکی سفارتخانے سابقہ دارالحکومت دارِسلام میں ہی قائم ہیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ job de graaf

آئیوری کوسٹ

تصویر کے کاپی رائٹ Getty

آبدجان مغربی افریقہ کے ملک آئیوری کوسٹ کا سب سے بڑا شہر اور معاشی مرکز ہے۔ 1960 میں اس ملک کی آزادی کے بعد پہلے صدر نے اپنی جائے پیدائش ضلع یاموزوکرو کو ملک کا دارالحکومت بنانے کا منصوبہ بنایا۔ یاموزوکرو آئیوری کوسٹ کا دارالحکومت 1983 میں بنا۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty