ناز شاہ کی جیت چیلنج کرنے کا فیصلہ

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption ’میرے علم میں آیا ہے کہ ان انتخابات میں پوسٹل بیلٹنگ میں بڑے پیمانے پر بےضابطگیاں ہوئی ہیں‘

برطانیہ کی رسپیکٹ پارٹی کے جارج گیلووے نے حالیہ عام انتخابات میں لیبر پارٹی کی ناز شاہ سے شکست کو چیلنج کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

جارج گیلووے کو ناز شاہ کے ہاتھوں بریڈ فورڈ ویسٹ میں شست کا سامنا کرنا پڑا تھا۔

جارج گیلووے نے فیصلہ کیا ہے کہ وہ اس نتیجے کو کالعدم قرار دینے اور ناز شاہ کو نااہل قرار دینے کے لیے قانونی چارہ جوئی کریں گے۔

جارج گیلووے کا کہنا ہے ’میرے علم میں آیا ہے کہ ان انتخابات میں پوسٹل بیلٹنگ میں بڑے پیمانے پر بےضابطگیاں ہوئی ہیں۔ ہم اس حوالے سے معلومات اکٹھی کر رہے ہیں جو اس پٹیشن کا حصہ ہوں گی جس میں ہم بریڈفورڈ ویسٹ کے انتخاب کے نتیجے کو کالعدم قرار دینے کی استدعا کریں گے۔‘

فلسطینیوں کے لیے آواز اٹھانے کے لیے مشہور برطانوی سیاستدان جارج گیلووے نے مزید کہا کہ اس پٹیشن میں ریپریزینٹیشن آف دا پیپلز ایکٹ 1983 کے سیکشن 106 کو بھی شامل کیا جائے گا۔

اس شق کا تعلق انتخابات کے نتائج پر اثر انداز ہونے کے لیے غلط بیان دینا ہے۔

گیلووے نے کہا ’ناز شاہ کی جانب سے ایشین ٹی وی شو پر ناز شاہ نے اردو میں ایک الزام لگایا تھا جو نہ تو سچ ہے اور نہایت ہی سنجیدہ نوعیت کا ہے۔‘

اسی بارے میں