ڈونلڈ ٹرمپ بھی امریکہ کے صدر بننے کے خواہاں

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption ڈونلڈ ٹرمپ وہ بارہویں رپبلکن ہیں جنھوں نے 2016 کا صدارتی انتخاب لڑنے کا ارادہ ظاہر کیا ہے

امریکی ارب پتی ڈونلڈ ٹرمپ نے بھی سنہ 2016 میں منعقد ہونے والے صدارتی انتخاب میں حصہ لینے کا اعلان کیا ہے۔

ٹرمپ ایک رپبلکن ہیں اور ماضی میں کئی بار اس جماعت کی صدارتی نامزدگی حاصل کرنے کی خواہش ظاہر کرنے کے باوجود انھوں نے کبھی باقاعدہ طور پر اس سلسلے میں کوشش نہیں کی۔

نیویارک کے ففتھ ایونیو پر واقع ٹرمپ ٹاورز میں اپنے حامیوں سے خطاب کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ، ’میں باقاعدہ طور پر صدر کے عہدے کے لیے انتخاب کی دوڑ میں شریک ہوں اور ہم اپنے ملک کو پھر سے عظیم بنائیں گے۔‘

ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا کہ ان کی جائیداد اور اثاثے انھیں ایک شاندار صدر بنانے میں مدد دیں گے۔

ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ، ’ہمارا ملک شدید بحران سے گزر رہا ہے اور ہمیں اب کامیابیاں نہیں مل رہیں۔ پچھلی بار ایسا کب ہوا کہ ہم نے کسی کو، مثلا چین کو کسی تجارتی سودے میں شکست دی ہو؟‘

تصویر کے کاپی رائٹ AP

ٹرمپ نے بندوق رکھنے کے حق کی حمایت کی اور یہ بھی کہا کہ جہاں وہ امریکی حکومت کے میڈیكيئر اور سوشل سکیورٹی کے پروگراموں کو جاری رکھیں گے وہیں صدر اوباما کے غیرقانونی تارکینِ وطن کے بارے میں ایگزیکیٹو آرڈر کو فوراً منسوخ کر دیں گے۔

انھوں نے کہا کہ، ’یہ دکھ کی بات ہے کہ امریکی خواب اب مر چکا ہے۔ اگر میں صدر بنا تو امریکہ کو پہلے سے بڑا، بہتر اور طاقتور بناؤں گا۔ ہم امریکہ کو پھر سے عظیم بنائیں گے۔‘

ڈونلڈ ٹرمپ وہ بارہویں رپبلکن ہیں جنھوں نے صدارتی انتخاب لڑنے کا ارادہ ظاہر کیا ہے۔ اس سے قبل وسکنسن کے گورنر سکاٹ واکر اور فلوریڈا کے سابق گورنر جیب بش بھی نامزدگی کے حصول کی دوڑ میں شامل ہو چکے ہیں۔

اسی بارے میں