چین میں شدید بارشیں، 18 ہلاک، لاکھوں بےگھر

Image caption سب سے زیادہ شدید بارش جنوبی صوبے ہیبوائی میں ہوئی اور تقریباً دس افراد ہلاک ہوئے

چین کے جنوبی علاقوں میں شدید بارشوں کے بعد آنے والے طوفان کے باعث کم سے کم 18 افراد ہلاک ہوئے ہیں اور چار لاپتہ ہیں۔

جنوبی صوبوں کے بعض علاقوں میں 48 گھنٹوں تک تقریباً آٹھ انچ تک بارش ہوئی۔

وزارتِ شہری امور کا کہنا ہے کہ جمعہ کو ہونے والی بارشوں کے نتجے میں ہزاروں مکانات کو نقصان پہنچا ہے اور لاکھوں افراد کو نقل مکانی کر کے محفوظ مقامات منتقل ہونے پر مجبور ہیں۔

بارش کے بعد زیادہ تر اموات مکانوں کی چھتیں گرنے، لینڈ سلائیڈنگ اور کرنٹ لگنے سے ہوئیں۔

سب سے زیادہ شدید بارش جنوبی صوبے ہیبوائی میں ہوئی اور تقریباً دس افراد ہلاک ہوئے۔ مقامی محکمۂ شہری امور کا کہنا ہے کہ صوبے بھر میں چھ لاکھ 64 ہزار افراد متاثر ہوئے ہیں۔دوسری جانب ہننان صوبے میں طوفان سے متاثر ہونے والوں کی تعداد پانچ لاکھ 27 ہزار تک پہنچ گئی ہے۔

گواینگزو صوبے اور اینوہائی میں بھی ہلاکتیں ہوئی ہیں۔

گواینگزو صوبے میں حکام بارش سے ہلاک ہونے والے 1700 مردہ سورؤں کو تلف کرنے میں مصروف ہیں۔

چین کی سرکاری خبر رساں ایجنسی ژینگوا کا کہنا گواینگزو صوبے کے ایک دیہات میں 20 گھنٹوں تک 15 انچ تک بارش ہوئی ہے، سور کی فارم ہاؤس میں مردہ جانوروں کی وجہ سے ہوا میں تعفن محسوس کیا جا سکتا ہے

اسی بارے میں