پوپ کی نئی عینک

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption دکان کے مالک اس سے پہلے بھی پوپ کے لیے عینک کے شیشے بنائے ہیں لیکن وہ شیشے ویٹیکن پہنچاتے رہے ہیں

روم کے شہریوں اور وہاں آنے والے سیاحوں کو جمعرات کو پوپ فرانسس کا ایک الگ ہی انداز دیکھنے کو ملا۔

رومن کیتھولک چرچ کے سربراہ پوپ فرانسس ایک عینک ساز کی دکان پر پہنچے اور انھوں نے اپنی عینک کے پرانے فریم میں نئے شیشے لگوائے۔

انھوں نے نئے شیشے کو پرانے فریم میں فٹ کرنے پر زور دیا اور بل اد کرنے پر بھی اڑ گئے۔

ان کے ہمراہ ان کا سکیورٹی عملہ بھی موجود تھا۔ پوپ فرانسس کو دیکھنے کے لیے لوگ وہاں اکٹھے ہو گئے اور انھیں گھیر لیا۔

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption پوپ نے جب مارکیٹ کا رخ کیا تو متعدد افراد ان کی ایک جھلک دیکھنے کے لیے اکٹھے ہو گئے

دکان کے مالک اس سے پہلے بھی پوپ فرانسس کے لیے عینک کے شیشے بنا چکے ہیں لیکن وہ شیشے ویٹیکن پہنچاتے رہے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ انھیں پوپ کے آنے کے بارے میں پہلے سے کوئی خبر نہیں تھی۔

پوپ فرانسساس سے پہلے کہہ چکے ہیں کہ انھیں اس بات کا ملال ہوتا ہے کہ وہ اکیلے باہر جا کر پیزا نہیں کھا سکتے۔

پوپ کا عہدے سنبھالنے سے قبل وہ بیونس آئرس میں اکثر عوامی مقامات پر دکھائی دیتے تھے۔

رواں ماہ نیشنل جیوگرافک میگزین میں ان کے بارے میں بتایا گیا ہے کہ ان کا دل روم کی گلیوں میں بھی اسی طرح چہل قدمی کرنے کا دل کرتا ہے جیسے وہ بیونس آئرس میں کیا کرتے تھے۔

اسی بارے میں