بریڈ فورڈ کا لاپتہ خاندان ترکی چلا گیا ہے: پولیس

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption پولیس کے مطابق انھیں بچوں کی بہبود کے حوالے سے تشویش ہے

برطانوی پولیس کا کہنا ہے کہ بریڈ فورڈ سے تعلق رکھنے والے سات افراد پر مشتمل لاپتہ خاندان ترکی چلا گیا ہے۔

مغربی یارک شائر پولیس کا کہنا ہے کہ شادی شدہ جوڑے عمران اور فرزانہ اور ان کے پانچ بچوں کی گمشدگی کی اطلاع منگل کے روز سامنے آئی تھی۔ ان کے بچوں کی عمریں پانچ سے 15 سال کے درمیان ہیں۔

’دولت اسلامیہ کے ساتھ ہم پہلے سے زیادہ محفوظ ہیں‘

شام میں ڈرون حملے میں برطانوی شدت پسند ہلاک

پولیس اہلکاروں کا کہنا ہے کہ اس خاندان کے افراد کو آخری بار پانچ اکتوبر کو دیکھا گیا تھا۔ تاہم ان کے بارے میں خیال کیا جا رہا ہے کہ انھوں نے ترکی کا سفر کیا ہے۔ پولیس کا مزید کہنا تھا کہ ’اِس وقت وہ کہاں ہیں یہ معلوم نہیں ہو سکا ہے۔‘

پولیس کے مطابق انھیں بچوں کی بہبود کے حوالے سے تشویش ہے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ اہلکار ’برطانیہ میں مقیم اس خاندان کے رشتے داروں سے رابطے میں ہیں‘ اور ان کی جانب سے ’ترکی کے حکام کے ساتھ مل کر تفتیش کا دائرہ کار بڑھا دیا گیا ہے۔‘

اسسٹنٹ چیف کانسٹیبل روس فوسٹر کا کہنا ہے کہ ’ہم درخواست کرتے ہیں کہ اگر کسی کے پاس اس خاندان کے حوالے سے کوئی معلومات ہیں تو وہ پولیس کو ضرور اطلاع کریں تاکہ انھیں باحفاظت برطانیہ واپس لایا جا سکے۔

’معلومات بظاہر کتنی ہی معمولی کیوں نہ ہوں وہ اس خاندان کو ڈھونڈ نکالنے کے لیے برطانوی اور سمندر پار پولیس کے لیے مددگار ثابت ہوسکتی ہیں۔ اس معلومات کے ذریعے انھیں واپس ان کے گھر ان کے پیاروں کے پاس پہنچایا جاسکتا ہے۔‘

اسی بارے میں