لندن کے گیٹ وک ایئر پورٹ پر مشتبہ شخص گرفتار

تصویر کے کاپی رائٹ timunwin
Image caption پولیس کا کہنا ہے کہ ابھی یہ تحقیقات کی جا رہی ہیں کہ کیا واقعہ ہوا اس لیے اس مشتبہ چیز کے بارے میں ابھی کچھ بھی کہنا قبل ازوقت ہوگا

برطانوی دارالحکومت لندن کے گیٹ وک ایئر پورٹ پر ایک شخص کی مشتبہ پیکٹ کے ساتھ گرفتاری کے بعد ہوائی اڈے کے شمالی ٹرمینل کو خالی کروا لیا گیا ہے۔

دھماکہ خیز مواد کو تلف کرنے کے ماہرین کے ادارے کے ترجمان نے کہا ہے کہ مقامی وقت کے مطابق صبح نو بجکر 30 منٹ پر ایک شخص کی جانب سے وہاں ’مشکوک حرکت‘ کی گئی۔

گیٹ وک ہوائی اڈے کی انتظامیہ نے مسافروں کو مشورہ دیا ہے کہ وہ کسی بھی قسم کی معلومات کے لیے ان سے رابطہ کریں۔

Image caption گیٹ وک ہوائی اڈے کی انتظامیہ نے مسافروں کو مشورہ دیا ہے کہ وہ کسی بھی قسم کی معلومات کے لیے ان سے رابطہ کریں

پولیس نے بتایا ہے کہ ایک شخص کو وہاں سے اس وقت حراست میں لیا گیا جب وہ ایک پیکٹ کو تلف کر رہا تھا تاہم پولیس کا کہنا ہے کہ ابھی یہ تحقیقات کی جا رہی ہیں کہ کیا واقعہ ہوا اس لیے اس مشتبہ چیز کے بارے میں ابھی کچھ بھی کہنا قبل ازوقت ہوگا۔

پولیس کا کہنا ہے کہ پیرس حملوں کے بعد یہ بہتر ہے کہ اس قسم کے واقعات کو بھی سنجیدگی سے لیا جائے۔

برٹش ایئر ویز اور ایزی جیٹ کی جانب سے کہا گیا ہے کہ وہ صورتحال کو دیکھ رہے ہیں اور ہوائی اڈے کے حکام کے ساتھ رابطے میں ہیں۔

خیال رہے کہ ٹرمینل کے اطراف کی سڑکوں کو بھی بند کر دیا گیا ہے۔

Image caption پولیس کا کہنا ہے کہ پیرس حملوں کے بعد یہ بہتر ہے کہ اس قسم کے واقعات کو بھی سنجیدگی سے لیا جائے

انتظامیہ نے کہا ہے کہ جن مسافروں کو شمالی ٹرمینل سے آنا تھا اب وہ جنوبی ٹرمینل سے آئیں لیکن جو لوگ پہلے سے شمالی ٹرمینل میں تھے وہ قریبی ہوٹلوں میں چلے جائیں۔

شمالی ٹرمینل کے قریب ایک ہوٹل میں فلائٹ کا انتظار کرنے والے مسافر ٹن مین کا کہنا ہے کہ وہاں موجود مسافر بھوکے اور تھکے ہوئے ہیں اور وہ مایوسی کا شکار ہیں۔

اسی بارے میں