’تم مسلمان نہیں ہو۔‘

تصویر کے کاپی رائٹ
Image caption ایک ٹیوب سٹیشن پر چاقو سے تین افراد کو زخمی کیا تھا

ٹوئٹر صارفین بڑی تعداد میں ٹویٹس کر رہے ہیں جن میں وائرل ہو جانے والا ہیش ٹیگ بھی شامل ہے۔ اس میں لندن کے ایک ٹیوب سٹیشن پر چاقو سے تین افراد کو زخمی کرنے والے شخص سے بیزاری کا اظہار کیا گیا۔

یہ ہیش ٹیگ اس عینی شاہد کی آواز پر مبنی الفاظ ہیں جو ایک وڈیو پر ریکارڈ ہوگئی اور جو بعد میں سوشل میڈیا پر بہت بڑی تعداد میں شیئر کی جا رہی ہے۔

حملہ آور نے مبینہ طور پر عام لوگوں کو زخمی کرتے ہوئے کہا تھا کہ یہ ’شام کے خلاف کارروائی کا جواب ہے۔‘ اس حملے میں ایک شخص شدید زخمی ہوا جبکہ ایک اور شخص کو معمولی زخم آئے۔

اس حملے کے بعد سامنے آنے والی ایک وڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ سُن کرنے والی گن کا نشانہ بننے کے بعد حملہ آور زمین پر پولیس کے قابو میں ہے۔

اور ٹھیک اسی وقت ایک نامعلوم عینی شاہد جملہ بولتا ہے "You ain't no Muslim bruv." ’تم مسلمان نہیں ہو۔‘

یہ جملہ سوشل میڈیا کے صارفین نے بہت زیادہ شیئر کیا ہے اور ان کا کہنا ہے کہ یہ لندن میں دہشت گردی اور تشدد پھیلانے کی کوششوں کا بھرپور جواب ہے۔

ٹوئٹر پر لوگوں کا کہنا ہے کہ ’اس سے زیادہ سچ کبھی بولا ہی نہیں گیا‘۔

اتوار کو یہ جملہ ٹوئٹر پر برطانیہ کے ٹرینڈنگ چارٹ میں سب سے اوپر تھا اور ہزاروں اسی پیغام کو شیئر کر رہے تھے۔

ایک صارف میتھو ہارپر نے کہا ’یہ جملہ دہشت گردی کا زبردست جواب ہے اور ایسے پاگلوں کے بارے میں ہمارے احساسات کی ترجمانی کرتا ہے۔‘

مو فاروق نے لکھا ’اس عینی شاہد کے نام جس نے کل کہا تھا کہ تم مسلمان نہیں ہو۔ وہ شخص لاکھوں برطانوی آوازوں کا نمائندہ ہے اور اس نے ایک لمحے میں بات پہنچا دی۔‘

رس نے لکھا ’کمیونٹی کی یکجہتی کے لیے ایک شخص نے ایک جملے سے وہ کام کر دکھا جو حکومت کے سوچے سمجھے اقدامات بھی نہیں کرتے۔‘

اب اس جملے کو سیاست دانوں نے بھی استعمال کرنا شروع کر دیا ہے۔ لیبر پارٹی کے لندن میں میئر کے امیدوار صادق خان نے بھی ٹویٹ میں کہا ’انتھا پسندی کو ہرانے کے لیے ہمیں انتھا پسندوں کے زہریلے نظریات کو للکارنا چاہیے۔‘