سعودی شہزادے اورڈونلڈ ٹرمپ میں جھڑپ

تصویر کے کاپی رائٹ EPA
Image caption پرنس ولید کی ٹویٹ کے جواب میں ڈونلڈ ٹرمپ نے انھیں کند ذہن کہا ہے

مشہور کاروباری شحصیت سعودی شہزادے ولید نے امریکی صدراتی امید وار ڈونلڈ ٹرمپ کو امریکہ کے لیے باعثِ ذلت قرار دیا ہے۔

سماجی رابطوں کی سائٹ ٹویٹر پر اپنے پیغام میں شہزادے ولید کا کہنا ہے کہ ڈونلڈ ٹرمپ کو صدراتی دورڑ سے الگ ہوجانا چاہیے کیونکہ وہ کسی صورت بھی انتخابات نہیں جیت سکتے۔

ڈونلڈ ٹرمپ کو مسلمان میرین کا جواب

ڈونلڈ ٹرمپ کے مسلم مخالف بیان پر شدید ردِ عمل

معذور صحافی کا مذاق اڑانے پر ڈونلڈ ٹرمپ پر تنقید

شہزادے ولید کی جانب سے یہ پیغام ڈونلڈ ٹرمپ کے مسلمانوں پر امریکہ میں داخلے پر پابندی کے بیان کے بعد سامنے آیا ہے۔

پرنس ولید کی ٹویٹ کے جواب میں ڈونلڈ ٹرمپ نے انھیں ’کند ذہن‘ کہا ہے۔

پرنس ولید نے اپنی ٹویٹ میں لکھا تھا کہ ’تم نہ صرف اپنی جماعت بلکہ پورے امریکہ کے لیے باعثِ ذلت ہو، امریکی صدارتی امیدواروں کی فہرست سے الگ ہو جاؤ تم کسی صورت بھی یہ انتخاب نہیں جیت سکتے۔‘

سعودی شہزادے کی اس ٹویٹ کے جواب میں ڈونلڈ نے ان پر الزام لگایا کہ وہ ’اپنے باپ کا پیسہ‘ استعمال کر کے امریکی سیاست دانوں کو کنٹرول کرنا چاہتے ہیں۔

Image caption برطانیہ میں ڈونلڈ ٹرمپ کے برطانیہ داخلے پر پابندی کے لیے شروع گئی ایک پٹیشن پر 5 لاکھ سے زائد افراد دستخط کر چکے ہیں

ان کا مزید کہنا ہے کہ اگر وہ منتخب ہوگئے تو پرنس ولید کو ایسا کرنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔

واضح رہے کہ ڈونلڈ ٹرمپ ریپبلکن جماعت کے صدارتی امیدواروں میں اس وقت سب سے زیادہ مقبول ہیں لیکن ان کے مسلمان مخالف حالیہ بیان کے بعد مختلف حلقوں کی جانب سے ان کو تنقید کا سامنا ہے۔

مشرق وسطیٰ کی ایک بڑی ریٹیل چین نے ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے امریکہ میں مسلمانوں کے داخلے پر پابندی کے مطالبے کے بعد ان کی کمپنی کی تیار کردہ مصنوعات کی فروخت بند کرنے کا اعلان کیا ہے۔

برطانیہ میں ڈونلڈ ٹرمپ کے برطانیہ داخلے پر پابندی کے لیے شروع گئی ایک پٹیشن پر 5 لاکھ سے زائد افراد دستخط کر چکے ہیں۔

یاد رہے کہ ڈونلڈ ٹرمپ نے متنازع بیان کیلیفورنیا میں مسلمان جوڑے کا جانب سے فائرنگ کر کے 14 افراد کو ہلاک کرنے کے واقعے کے بعد دیا تھا۔

اسی بارے میں