کیوبا نے امریکی ہیل فائر میزائل واپس کردیا

تصویر کے کاپی رائٹ Getty

کیوبا نے امریکہ کو وہ ہیل فائر میزائل واپس کر دیا ہے جو جون 2014 کو غلطی سے کیوبا کے دارالحکومت ہوانا بھجوا دیا گیا تھا۔

امریکی اخبار وال سٹریٹ جرنل کے مطابق اس میزائل کو نیٹو کی مشقوں کے لیے سپین بھجوایا گیا تھا۔

سپین سے یہ میزائل جرمنی بھجوایا گیا اور وہاں سے پیرس کے ہوائی اڈے اور وہاں سے اس میزائل کو فلوریڈا بھجوائے جانا تھا۔

لیکن اس میزائل کو غلطی سے ایئر فرانس کی اس فلائٹ پر لاد دیا گیا جو ہوانا جا رہی تھی۔

امریکہ کے لیے یہ ایک شرمنا واقعہ تھا کیونکہ امریکہ کو کیوبا سے یہ میزائل واپس مانگنا پڑا۔

کیوبا کی وزارت خارجہ نے ایک بیان میں کہا تھا ’یہ میزائل پیرس سے غلطی سے ہوانا بھجوا دیا گیا۔ کیوبا نے ایک ذمہ دار ملک ہونے کا ثبوت دیتے ہوئے امریکہ کے ساتھ تعاون کیا اور اس مسئلے کو حل کیا۔‘

اے جی ایم 114 ہیل فائر میزائل لیزر گائیڈڈ میزائل ہے اور اس کو ہیلی کاپٹر سے یا ڈرون سے فائر کیا جا سکتا ہے۔

امریکی حکام کو خدشہ تھا کہ کیوبا اس میزائل کی ٹیکنالوجی شمالی کوریا، چین یا روس سے شیئر کر سکتا ہے۔

یاد رہے کہ امریکہ اور کیوبا نے اپنے سفارتی تعلقات 50 سال بعد پچھلے سال جولائی میں بحال کیے ہیں۔

اسی بارے میں