استنبول میں خود کش حملہ، چار افراد ہلاک

تصویر کے کاپی رائٹ EPA

ترکی کے شہر استنبول میں حکام کے مطابق ایک سیاحتی مقام پر خود کش حملے میں 4 افراد ہلاک اور 20 زحمی ہو گئے ہیں۔

انقرہ دھماکے کی ذمہ داری کرد تنظیم نے قبول کر لی

پولیس اور ایمولینسز جائے وقوعہ پر پہنچ چکی ہے۔ ترکش میڈیا پر دکھائے جانے والے مناظر میں لوگوں کو پریشانی کے عالم میں دیکھا جا سکتا ہے۔

دھماکے کے مقام استقلال سٹریٹ پر ہفتے کے آخر میں رش ہوتا ہے۔

گذشتہ اتوار کو ترکی کے دارالحکومت انقرہ میں ہونے والے دھماکے میں 37 افراد ہلاک ہوئے تھے اور کرد عسکریت پسند تنظیم ٹی اے کے نے اس حملے کے ذمہ داری قبول کی تھی۔ اس کے بعد ملک کے صدر رجب طیب اردوغان نے کہا تھا کہ حکومت دہشت گردوں کے خلاف کارروائی کرے گی اور انھیں ’گھٹنے ٹیکنے پر مجبور کر دے گی۔‘ ترک صدر کا کہنا تھا کہ اس قسم کے حملوں سے ملک کی افواج کا عزم مزید مضبوط ہی ہوتا ہے۔

کرد باغیوں نے حالیہ مہینوں میں ترک علاقے میں کئی حملے کیے ہیں جبکہ شدت پسند تنظیم دولتِ اسلامیہ بھی انقرہ کو نشانہ بنا چکی ہے۔

خبر کی تفصیلات موصول ہو رہی ہیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ DHA
Image caption دھماکے کے مقام استقلال سٹریٹ پر ہفتے کے آخر میں رش ہوتا ہے
تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption دھماکے کے بعد لوگ ادھ کھلی دکان سے باہر دیکھتے ہوئے