30 شیروں کی سرکس سے رہائی

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption شیروں کو پیرو اور کولمیبا سے آزاد کرا کر جنوبی افریقہ کے جنگلوں میں رکھا جائے گا

کولمبیا اور پیرو سے 30 سے زائد شیروں کو سرکسوں سے بازیاب کروا کر جنوبی افریقہ میں محفوظ پناہ گاہوں تک پہنچایا گیا ہے۔

ان شیروں کو رہائی دلانے والے اینیمل ڈیفینڈرز انٹرنیشنل (اے ڈی آئی) نامی گروپ کا کہنا ہے کہ بیشتر جانوروں کو ٹرکوں پر لدے پنجروں میں قابل رحم حالت میں رکھا گیا تھا۔

جانوروں کی بھلائی کے لیے کام کرنے والے گروپ کے مطابق بازیاب کروائے جانے والے شیروں کی یہ سب سے بڑی ایئر لفٹ ہے۔

منتظمین کا کہنا ہے کہ ان شیروں کو جنوبی افریقہ میں شیروں کی ایمویا نامی پناہ گاہ میں رکھا جائے گا۔

اے ڈی آئی کی ترجمان جان کریمر کا کہنا ہے کہ یہ ایک اہم ریسکیو آپریشن تھا جس کے ذریعے دنیا کو یہ پیغام پہنـچا کہ لوگ جانوروں کے ساتھ کیسا سلوک کرتے ہیں۔‘

منتظمین کے مطابق پہلے گروپ سے نو شیروں کو کولمبیا کے دارالحکومت بگوٹا سے کارگو طیارے کے ذریعے یکجا کیا گیا جس کے بعد اس طیارے کو پیرو کے دارالحکومت لیما لے جایا گیا اور وہاں سے 24 سے زائد شیروں کو لایا گیا۔

یہ طیارہ سنیچر کو جنوبی افریقہ کے شہر جوہانسبرگ پہنچے گا۔

خبر رساں ادارے اے پی نے اے ڈی آئی کے نائب صدر ٹام فلپس کے حوالے سے بتایا ’ان شیروں کو افریقی جنگلوں میں آزاد گھومتے پھرتے دیکھنا بہت ہی تسلی بخش نظارہ ہوگا۔‘

خیال رہے کہ ان شیروں کو پیرو میں جنگلی جانوروں کے استعمال پر سنہ 2011 اور کولمبیا میں سنہ 2013 میں عائد پابندیوں کے نتیجے میں آزاد کرایا گيا ہے۔

اسی بارے میں