اٹلی کے سابق وزیر اعظم برلسکونی کی ہارٹ سرجری

تصویر کے کاپی رائٹ EPA

اٹلی کے سابق وزیرِ اعظم سلویو برلسکونی کے ڈاکٹروں نے کہا ہے کہ دل کے دورے کے بعد جو کہ جان لیوا ثابت ہو سکتا تھا برلسکونی کی فوری طور پر ہارٹ سرجری کی جائے گی۔

ڈاکٹر البرٹو زنگریلو نے روم میں صحافیوں کو بتایا کہ 79 سالہ برلسکونی کی ہارٹ سرجری آئندہ ہفتے کے وسط میں کی جائے گی۔

ڈاکٹر کے مطابق برلسکونی کی ہارٹ سرجری میں ان کے دل کی متاثرہ آروٹک والو کو تبدیل کیا جائے گا۔

ادھر برلسکونی کی جماعت کا کہنا ہے کہ سابق وزیر اعظم کی صحت کے بارے میں ’زیادہ فکر کرنے کی ضرورت نہیں ہے۔‘

ڈاکٹر البرٹو زنگریلو کے مطابق برلسکونی کو ’شدید تکلیف میں ہسپتال لایا گیا تھا۔‘

اٹلی کے چار بار وزیر اعظم رہنے والے برلسکونی کو ٹیکس چوری اور رشوت کے مقدمات کا سامنا ہے۔

خیال رہے کہ برلسکونی کو رواں ہفتے کے آغاز میں ان کے آبائی شہر میلان کے ایک ہسپتال لے جایا گیا تھا جہاں ان کے چند ٹیسٹ لیے گئے تھے۔

نامہ نگاروں کا کہنا ہے کہ ارب پتی برلسکونی اٹلی کی سیاست پر بڑا اثر رکھتے ہیں۔

فٹ بال کلب اے سی میلان کے مالک سلویو برلسکونی کو بدعنوانی، اختیارات کے ناجائز استعمال، کم عمر لڑکیوں سے جنسی تعلقات اور سیکس کے لیے رقم کی ادائیگی جیسے الزامات کا سامنا رہا ہے۔