’صحرائے صحارا سے 34 تارکین وطن کی لاشیں برآمد‘

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption ہلاک ہونے والے دو افراد کا تعلق نائجریا سے ہے جبکہ دیگر کی قومیت کے بارے میں فی الحال واضح نہیں ہے

افریقی ملک نائیجر کا کہنا ہے کہ صحرائے صحارا میں الجزائر کی سرحد کے قریب 34 تارکین وطن کی لاشیں ملی ہیں جن میں 20 بچے بھی شامل ہیں۔

حکومت کی جانب سے جاری ہونے والے بیان میں کہا گیا ہے کہ یہ لاشیں ریگستانی قصبے آساماکا سے ملی ہیں۔

وزیر داخلہ بازوم محمد کا کہنا ہے کہ ایسا لگ رہا ہے کہ یہ تارکین وطن انسانی سمگلروں کے چھوڑ جانے کے بعد پیاس کی شدت کی وجہ سے ہلاک ہوئے ہیں۔

نائیجر سب صحارن افریقہ اور یورپ کے درمیان پناہ گزینوں کا ایک بڑا راستہ ہے۔

بازوم محمد نے بتایا کہ ہلاک ہونے والوں میں نو خواتین اور پانچ مرد ہیں۔ ان کے مطابق یہ ہلاکتیں چھ جون سے 12 جون کے درمیان ہوئی ہیں۔

ہلاک شدگان میں سے دو کا تعلق نائیجریا سے ہے جبکہ دیگر کی قومیت کے بارے میں فی الحال واضح نہیں ہے۔

انٹرنیشنل آرگنائزیشن فار مائیگریشن کے مطابق گذشتہ سال شمالی آغادیز کے علاقے سے ایک لاکھ 20 ہزار افراد کا گزر ہوا۔

حالیہ برسوں میں ہزاروں غیر قانونی تارکین وطن میں سے زیادہ تر نے مالی اور نائیجر کے راستے الجزائر کا سفر کیا ہے۔

اسی بارے میں