نوجوان پاکستانی ٹیم کی لارڈز میں تاریخی فتح

میچ میں عمدہ کارکردگی پر مین آف دی میچ محمد عباس قرار پائے جنھوں نے دونوں اننگز میں چار چار وکٹیں حاصل کیں۔

،تصویر کا کیپشن

پاکستان اور انگلینڈ کے درمیان لارڈز میں ہونے والے پہلے ٹیسٹ میچ میں پاکستان نے انگلینڈ کو نو وکٹوں سے شکست دے دی ہے

،تصویر کا کیپشن

انگلینڈ کی ہار کی بنیادی وجہ پاکستان کی بہترین بولنگ تھی۔ پاکستانی گیند بازوں نے کسی بھی انگلینڈ کے کھلاڑی کو دونوں اننگزمیں بڑا سکور نہیں کرنے دیا

،تصویر کا کیپشن

مین آف دی میچ محمد عباس تھے جنھوں نے دونوں اننگز میں چار چار وکٹیں حاصل کیں

،تصویر کا کیپشن

پاکستانی ٹیم قدرے ایک نوجوان ٹیم ہے۔ اس ٹیم میں صرف چار ایسے کھلاڑی ہیں جو کہ پاکستان کے انگلینڈ کے گذشتہ دورے پر ٹیم میں شامل تھے

،تصویر کا کیپشن

پاکستانی ٹیم نے نہ صرف بیٹنگ اور بولنگ میں شاندار کارکردگی دیکھائی بلکہ فیلڈنگ کے شعبے میں بھی انگلینڈ کو پیچھے چھوڑ دیا

،تصویر کا کیپشن

پاکستان کے بولنگ اٹیک کے سب سے سینیئر بولر محمد عامر نے اس میچ میں بھی اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کیا اور مجموعی طور پر پانچ وکٹیں حاصل کیں

،تصویر کا کیپشن

انگلینڈ کی دوسری اننگز میں جوس بٹلر اور ڈوم بیس نے ساتویں وکٹ کی شراکت میں 126 قیمتی رنز جوڑے۔ جب یہ دونوں بلےباز کریز پر آئے تو صرف 110 کے سکور پر انگلینڈ کی چھ وکٹیں گر چکی تھیں

،تصویر کا کیپشن

نیٹ ویسٹ ٹیسٹ سیریز میں صرف دو میچ ہیں اور پاکستان کو اس میں ناقابلِ شکست ایک صفر کی برتری حاصل ہوگئی ہے۔ اگلا میچ ہیڈنگلی میں کھیلا جائے گا