بالی وڈ میں 'دوستی تک تو ٹھیک لیکن محبت ہونا اور بھی برا ہے'

کنگنا راناوت تصویر کے کاپی رائٹ SPICE PR
Image caption کنگنا راناوت نے اپنی اداکاری سے فلم انڈسٹری میں مخصوص جگہ بنائی ہے

انڈیا کی دو نیشنل ایوارڈ جیتنے والی اداکارہ کنگنا راناوت نے فلم 'کوئین' اور 'تنو ویڈز منو' سے بالی وڈ میں اپنی خاص جگہ بنائی ہے لیکن ایک دہائی سے زیادہ عرصے تک بالی وڈ میں کام کرنے کے بعد بھی کنگنا کوئی دوست نہیں بناسکیں اور اسی وجہ سے وہ اپنے آپ کو کامیاب کہتی ہیں۔

بی بی سی سے خصوصی گفتگو کے دوران کنگنا راناوت نے فلم انڈسٹری کی دوستی پر کہا: 'میں کامیاب ہوں کیونکہ یہاں میرا کوئی دوست نہیں ہے۔ اگر آپ کے دوست کامیاب ہو جاتے ہیں یا صرف آپ کامیاب ہو جاتے ہو تو رشتے الجھ جاتے ہیں۔ کام پر جب انسانی جذبات غالب آ جاتے ہیں تو تلخی آجاتی ہے اور آپ درست فیصلہ نہیں کر پاتے۔'

٭ کنگنا اور رتک کا جھگڑا مزید الجھ گیا

٭ ایشوریہ اور رنبیر کے ہاٹ سینز پر قینچی

کنگنا نے کہا کہ 'دوستی تک تو ٹھیک ہے لیکن فلم انڈسٹری میں محبت ہو جانا اور بھی برا ہے۔' اس لیے وہ کسی ڈائریکٹر، اداکار یا شریک آرٹسٹ کی دوست نہیں ہیں اور فلم انڈسٹری میں صرف کام کرتی ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ SPICE PR
Image caption دوسری جنگ عظیم پر مبنی ان کی فلم رواں ماہ کے اخیر میں ریلیز ہو رہی ہے

بالی وڈ میں اداکاراؤں کو اداکاروں کے مقابلے میں کم پیسے ملتے ہیں اور حالیہ دنوں اس کے متعلق بہت سی اداکاراؤں نے اپنی بات رکھی ہے۔ کنگنا کا کہنا ہے کہ انھوں نے باکس آفس پر اپنی اہمیت ثابت کی ہے لیکن ان کے مطابق اب بھی فلم انڈسٹری کے بہت سے لوگوں کی ذہنیت نہیں بدلی ہے۔

وہ کہتی ہیں: 'بہت سے لوگ خواتین کے اہم کردار والی فلم بنا کر پیسے کمانا چاہتے ہیں لیکن خواتین کو پیسے نہیں دیتے۔ ہماری جدوجہد جاری ہے۔ اگر کچھ نہیں ہوا تو ہم خود اپنے لیے فلمیں بنائیں گے۔

تصویر کے کاپی رائٹ SPICE PR
Image caption یہ فلم 24 فروری کو ریلیز ہو رہی ہے

حالیہ دنوں بالی وڈ سے ہالی وڈ جانے والے فنکاروں کی تعداد میں اضافہ ہوا ہے لیکن کنگنا فی الحال بالی وڈ میں رہ کر اپنے ناظرین کے دل میں اپنے لیے مخصوص جگہ بنانے میں یقین رکھتی ہیں۔

ان کے مطابق انڈیا سے جانے والا کوئی بھی ہندوستانی آرٹسٹ ہالی وڈ میں مہمان ہی ہوگا اور کوئی ہندوستانی کردار ہی ادا کرے گا۔ انہیں فخر ہے کی پرینکا چوپڑہ، عرفان خان اور دیپکا پاڈوکون ملک کا نام روشن کر رہے ہیں لیکن یہ گمان کر لینا کہ ان کے وہاں جانے سے بہت کچھ بدل جائے گا تو یہ خام خیالی ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ SPICE PR
Image caption اس فلم میں ان کے ساتھ سیف علی خان اور شاہد کپور ہیں

وہ کہتی ہے کہ 'جو اداکار کامیاب ہو جاتے ہیں وہ دوسرے فنکاروں کو آگے آنے نہیں دیتے لیکن یہ چلن صرف فلم انڈسٹری تک ہی محدود نہیں ہے۔ 90 کا دور فلم انڈسٹری کے لیے سب سے برا دور تھا جب انڈرورلڈ اور ڈان کا دبدبہ تھا لیکن اب بہترین دور ہے۔ فلم انڈسٹری ابھی عنفوان شباب میں ہے اور اسے اچھی فلموں سے مزید جوان کرنا ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption فلم رنگون کے لیے ایک پروموشن کے دوران

وشال بھاردواج کی عالمی جنگ -2 کے پس منظر پر مبنی فلم 'رنگون' میں کنگنا راناوت مس جولیا کا کردار ادا کر رہی ہیں جس کی تحریک 40 کی دہائی کی سٹنٹ ہیروئن سے ملی ہے۔ فلم میں کنگنا اداکار سیف علی خان اور شاہد کپور کے ساتھ رومانس کرتی نظر آئیں گی۔ فلم 24 فروری کو ریلیز ہوگی۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں