#MeToo: کیا جِن بوتل سے باہر آچکا ہے؟

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images

شاید ہی کچھ لوگوں نے تصور کیا ہوگا کہ ہیش ٹیگ می ٹو ( #MeToo) تحریک بالی وڈ میں بوتل سے نکلنے والے اس جِن کی شکل اختیار کر لے گی جسے کنٹرول کرنا مشکل ہوتا جائے گا۔

اسی لیے ابتدا میں غالباً بڑے ستاروں نے اس بارے میں کچھ بھی کہنے سے گریز کیا۔ لیکن اس ہفتے جب اس پِنڈورا باکس سے بڑے بڑے نام نکلنے شروع ہوئے،اور نہ جانے اور کتنے بڑے نام باہر آئیں گے، تو لوگوں کو اس کی سنگینی کا احساس ہوا۔

اداکار آلوک ناتھ، رجت کپور، نانا پاٹیکر کے ساتھ ہدایت کار وکاس بہل، سدھارتھ کپور، گنیش آچاریہ، پیوش مشرا کے بعد پروڈیوسر کریم مورانی ،سبھاش گھئی اور ساجد خان جیسے بڑے ناموں نے انڈسٹری کو ہلا کر رکھ دیا۔

یہ بھی پڑھیے

انڈیا: جنسی ہراس سے جڑے بڑے ناموں کے انکشاف کا سلسلہ جاری

'میرے ساتھ جنسی زیادتی ہوئی ہے' کیا یہ کہنا آسان ہے؟

اس کے بعد عامر خان نے پہل کرتے ہوئے ڈائریکٹر سبھاش کپور کی فلم سے علیحدہ ہونے کا اعلان کر دیا۔ عامر خان گلشن کمار کی پائو پک میں سبھاش کپور کے ساتھ کام کرنے والے تھے۔

دوسری جانب ساجد خان کے خلاف سنگین الزامات کے بعد اکشے کمار نے انکی فلم ہاوس فل فور کی شوٹنگ روکنے کا مطالبہ کر ڈالا اور ساجد خان کو یہ فلم چھوڑنی پڑی۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images

ساجد خان کی بہن اور ہدایت کار فرح خان جو ہر موقعے پر اپنے بھائی کی ڈھال بن کر کھڑی ہو جاتی تھیں اس بار اپنے بھائی کے سامنے کھڑی نظر آئیں ٹوئٹر پر انھوں نے لکھا کہ یہ انکے کنبے کے لیے مشکل وقت ہے اور ساجد کے خلاف الزامات ثابت ہوئے تو انکے بھائی کو پچھتانا ہوگا۔

فرح نے لکھا کہ وہ اس تحریک میں شامل خواتین کے ساتھ کھڑی ہیں اورکسی بھی لڑکی کے ساتھ زیادتی کے خلاف ہیں۔ ساجد خان نے ایک بیان میں ہاؤس فل فور سے علیحدگی کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ ان الزامات کو غلط ثابت کریں گے۔

یہ بھی پڑھیے

بالی وڈ میں جنسی ہراس حقیقت کیوں ہے؟

جنسی ہراس پر خاتون صحافیوں کی بے خوف آوازیں

خبر رساں ادارے پریس ٹرسٹ آف انڈیا کی جانب سے رابطہ کیے جانے پر ہدایت کار سبھاش گھئی نے خود پر ریپ کے الزامات کو غلط قرار دیتے ہوئے قانونی کارروائی کی دھمکی دی ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ BOLLYWOOD AAJ KAL
Image caption کنگنا رناوت نے یہ دعویٰ کیا تھا کہ وہ اور رتک روشن ریلیشن میں تھے اور رتک نے انھیں کئی میل بھی بھیجے تھے

ادھر کنگنا رناوت جو اپنی فلم 'منی کارنیکا' کی ریلیز کے موقعے پر اب پروموشن شروع کرنے والی ہیں اس بہتی گنگا میں ہاتھ دھوتی نظر آئیں اور اپنے سابق دوست رتک روشن کو نشانے بناتے ہوئے کہہ بیٹھیں کہ انڈسٹری کی کچھ شخصیات اپنی بیویوں کو ٹرافی جبکہ دوسری لڑکیوں کو داشتہ بنا کر رکھنا چاہتے ہیں۔

کنگنا کا یہ وار خالی جاتا ہے یا پھر رتک روشن بھی کوئی جوابی کارروائی کرتے ہیں یہ ابھی دیکھنا باقی ہے۔

اسی بارے میں