شوبز ڈائری: کنگنا رناوت کی صحافی کے ساتھ تلخ کلامی

کنگنا رناوت تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption اس بار کنگنا کا جھگڑا رتک روشن یا کرن جوہر سے نہیں بلکہ ایک صحافی جسٹن راؤ سے ہوا ہے

اداکارہ کنگنا رناوت کے تازہ ترین جھگڑے نے ایکتا کپور کی بالاجی موشنز پکچرز کو پریشانی میں ڈال دیا ہے۔

اس بار کنگنا کا جھگڑا رتک روشن یا کرن جوہر سے نہیں بلکہ ایک صحافی جسٹن راؤ سے ہوا ہے۔

کنگنا کی فلم 'ججمینٹل ہے کیا' کے گانے کے لانچ کے لیے وہ خود پریس کانفرنس میں تھیں کہ اچانک صحافی جسٹن راؤ پر برسنے لگیں کہ 'تم میرے خلاف باتیں لکھتے ہو۔'

یہ بھی پڑھیے

مجھے ہر چیز کے لیے لڑنا پڑتا ہے: کنگنا رناوت

خواتین کے لیے 'تضحیک آمیز' فلم اتنی کامیاب کیوں

کنگنا رناوت کی بایو پک بالی وڈ میں کئی بم پھوڑے گی

جواب میں صحافی نے کنگنا کے الزام کو مسترد کرتے ہوئے پوچھا کہ ان کے پاس اس کا کوئی ثبوت ہو تو پیش کریں، کنگنا کے پاس کوئی ٹھوس جواب نہیں تھا مگر یہ بحث آہستہ آہستہ تلخ ہوتی گئی اور پریس کانفرنس میں ایک ہنگامہ برپا ہو گیا۔

تقریب کے بعد صحافیوں کی تنظیم نے کنگنا کے بائیکاٹ کرنے کا فیصلہ کیا جس پر ایکتا کپور نے ایک بیان جاری کرتے ہوئے صحافیوں سے معافی مانگی اور لکھا کہ اس ایک واقعے کی وجہ سے ان تمام لوگوں کی محنت کو برباد نہ ہونے دیا جائے جو اس فلم کو بنانے میں کی گئی ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption کنگنا کی فلم 'ججمینٹل ہے کیا' کے گانے کے لانچ کے لیے وہ خود پریس کانفرنس میں تھیں کہ اچانک جسٹن راؤ پر برسنے لگیں کہ 'تم میرے خلاف باتیں لکھتے ہو۔'

لیکن کنگنا نے معافی مانگنا تو دور کی بات سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو جاری کی جس میں ایک بار پھر نہ صرف صحافیوں کو لتاڑا بلکہ انھیں مفت خوری اور سطحی بھی قرار دیا۔

آخر کنگنا کو ہو کیا گیا ہے انھیں اتنا غصہ کیوں آتا ہے؟ ان کے غصے نے فلم کی رلیز اور پروموشن پر اثر ڈالا تو فلم کی پروڈیوسر ایکتا کپور نے سنبھال لیا لیکن جب کنگنا کے غصے کا اثر ان کے اپنے کریئر پر پڑنے لگے گا تو کون سنبھالے گا؟

کنگانا کے اس واقعے پر گلوکارہ سونا مہا پاترہ نے ٹوئٹر پر ایک پیغام میں لکھا کہ 'جب خواتین جابرانہ نظام سے لڑتی ہیں، رکاوٹیں عبور کرتی ہیں اور پھر جیت جاتی ہیں تو یقیناً اِس چیز کا جشن منایا جانا چاہیے۔ اور اگر وہ بعد میں اُسی جابرانہ نظام اور دھونس جمانے والوں سے سارے ہتھکنڈے سیکھ کر خود بھی ایک بلا بن جاتی ہیں تو یہ بڑا المیہ ہوتا ہے۔'

سونا مہا پاترہ کا کہنا درست ہے کہ اپنے ساتھ ہونے والی زیادتیوں کو ہتھیار بنا کر خود دوسروں پر حملہ کرنا عقلمندی نہیں۔

ایک مساوی اور منصفانہ دنیا کی جدوجہد کرنے کا مطلب یہ نہیں ہے کہ آپ ان کے جیسے بن جائیں جنھوں نے آپ کے ساتھ غلط کیا تھا۔ اب جب خواتین ہر پیشے میں مرودں کے شانہ بشانہ کھڑی ہیں تو امید یہی ہے کہ یہ وہ با اختیار اور مہذب انداز میں آگے بڑھیں۔

اب کنگنا اور ان کی بہن رنگولی ٹوئٹر پر سونا مہا پاترہ کا کیا حال کریں گی یہ جلدی ہی پتہ چل جائے گا۔

اس ہفتے 'لائن کِنگ‘ کا ہندی ٹریلر ریلیز ہوا جس میں شاہ رخ خان نے موسافا کے کردار کو آواز دی اور ان کے بیٹے آرین سِمبا کی آواز بنیں گے۔

لوگوں کو ٹریلر کافی پسند آ رہا ہے جس کے بعد شاہ رخ نے ٹوئٹر پر لوگوں سے سوال کیا کہ کیا آرین کی آواز ان سے ملتی ہے۔ زیادہ تر لوگوں نے اس بات سے اتفاق کیا کہ آرین کی آواز ہو بہو اپنے والد کے جیسی تھی خود شاہ رخ نے بھی اس بات کو تسلیم کیا کہ انھیں لگا کہ جیسے یہ انھی کی آواز ہو۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں