شوبز ڈائری: ’دارو کا کوٹہ تو فُل ہے نا چنٹو چاچا‘

رشی کپور تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images

کورونا وائرس کی وبا نے دنیا بھر میں لوگوں کو بلکل ایک نئے ہی انداز میں جینے پر مجبور کر دیا ہے۔ بازار بند، روزگار بند، سڑکیں سُنسان اور ساتھ ہی فلم انڈسٹری بھی بند۔ ایسے میں بالی وڈ ستارے کیا کریں۔

اب چونکہ سب لوگ خالی ہیں اور خبروں یا سوشل میڈیا پر بھی رہنا ضروی ہے تو سب اپنے اپنے کام پر لگ گئے۔ کسی نے یہ سبق پڑھانا شروع کر دیا کہ ہاتھ کس طرح دھوئیں تو کوئی گھر میں جم کی طرح کی کسرت کرنے کی ٹریننگ دے رہا ہے اور کئی بڑے بڑے ستارے مودی جی کے 21 دن کے لاک ڈاؤن پر پوری طرح عمل کرنے کی گذارش کر رہے ہیں۔

دبنگ خان نے حال ہی میں ایک ویڈیو میں لوگوں کو مشورہ دیا کہ برائے مہربانی ہاتھ دھوتے رہیں، ایک دوسرے سے نہ ملیں اور بغیر ضرورت باہر نہ نکلیں۔ ورون دھون لوگوں کی کسرت کرنے کی حوصلہ افزائی کر رہے ہیں۔

یہ بھی پڑھیے

شروتی حاسن کے اعتراف پر لوگوں کا اعتراض

سمرتی ایرانی کو تاپسی کی ’تھپڑ‘ میں دلچسپی کیوں

دلی فسادات پر جاوید اختر کی ٹویٹ، سوشل میڈیا پر تنقید

’اکشے، رنویر، اجے دیوگن کے ہوتے ہوئے قطرینہ کو کون دیکھے گا‘

ڈینو موریہ نے اپنی ورزش کرتی تصاویر پوسٹ کیں جبکہ ارجن کپور فلمیں دیکھ رہے ہیں۔ نیہا دھوپیا کہتی ہیں کہ ان حالات میں بھی ’پوزیٹیو‘ رہیں اور ایشا گپتا کپڑے بدل بدل کر ویڈیوز بنا کر پوسٹ کر رہی ہیں۔

رنویر سنگھ ہمیشہ کی طرح اپنی بیگم دپیکا کو بانہوں میں لیے اپنی تصاویر پوسٹ کر رہے ہیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption رنویر سنگھ ہمیشہ کی طرح اپنی بیگم دپیکا کو بانہوں میں لیے اپنی تصاویر پوسٹ کر رہے ہیں

لیکن کچھ لوگو ں کے پاس اب وہ کام ہیں جو پہلے انھوں نے شاید ہی کیے ہوں۔

مثال کے طور پر کترینہ کیف اپنے گھر کی صفائی کر رہی ہیں۔ انسٹاگرام پر اپنی ایک تصویر کے ساتھ انھوں نے بتایا کہ آج کل وہ اپنا گھر صاف کر رہی ہیں۔

ورون دھون کے ساتھ ساتھ کئی ستاروں نے ورک آؤٹ کی اپنی تصاویر پوسٹ کیں، ایسے میں فلمساز فرح خان کو غصہ آ گیا تو انھوں نے لکھا کہ کورونا وائرس سے پیدا ہونے والے ان سنگین حالات میں اپنے ورک آؤٹ کی تصاویر پوسٹ کرنا بند کریں کیونکہ اس وقت لوگوں کو اپنے فگر کا خیال رکھنے سے بھی زیادہ سنگین مسائل درپیش ہیں۔

فرح خان شاید یہ نہیں سمجھ پائیں کہ روٹی، کپڑا، مکان اور روزگار غریبوں کے مسائل ہیں جبکہ دولت، شہرت اور عیش و آرام سے لیس لوگوں یا یوں کہیں کہ پیٹ بھرے لوگوں کے مسائل کچھ اور ۔

اب شوبز کے لوگ ’شو آف‘ نہیں کریں گے تو کام کیسے چلے گا۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption ’اس وقت لوگوں کو اپنے فگر کا خیال رکھنے سے بھی زیادہ سنگین مسائل درپیش ہیں‘

ویسے غصہ تو رشی کپور صاحب کو بھی کافی آ رہا ہے۔ دراصل انھوں نے بھی کورونا وائرس کے بارے میں سوشل میڈیا پر ایک اچھا سا پیغام لکھ کر اپنی اہم ذمہ داری پوری کرنے کی کوشش کی کہ ’بھائی گھر سے نہ نکلو،لوگوں سے نہ ملو، ہاتھ دھوئیں‘ وغیرہ وغیرہ۔

جواب میں ایک منچلے ٹوئٹر صارف نے لکھا ’دارو کا کوٹہ تو فُل ہے نہ چنٹو چاچا۔‘ جبکہ ایک اور صارف نے جلتی پر تیل چھڑکتے ہوئے لکھا ’وسکی کا سٹاک تو ہے نہ آپ کے پاس۔‘

پھر کیا تھا چنٹو جی کو بہت غصہ آیا اور جواب میں انھوں نے ایسی ایسی سنائیں جنھیں لکھنا ذرا مشکل ہے، بہرحال انھوں نے یہ بھی کہا کہ میرے لائف سٹائل یا میرے ملک کا مذاق بنانے والوں کو میں بلاک کر دوں گا۔

شاعر اور سینسر بورڈ کے سربراہ پرسن جوشی ایسے وقت میں بھی مودی جی کو خوش کرنے میں لگے ہوئے ہیں اور انھوں نے ان کے 21 دن کے لاک ڈاؤن پر ایک نظم لکھ ڈالی ہے۔

بالی ووڈ کی تاریخ گواہ ہے پرسن جی نے جب جب ایسا کچھ کارنامہ انجام دیا تب تب انھیں دل کھول کر نوازا گیا ۔اب انھیں کیا چاہیے کوئی ان سے پوچھے کہ بھائی اب بچے کی جان لو گے کیا؟

اسی بارے میں