کینیڈین وزیراعظم جسٹن ٹروڈو کا اپنے بالوں کو سنوارنے کا انداز سوشل میڈیا صارفین کو بھا گیا

جسٹن ٹروڈو

،تصویر کا ذریعہCPAC

دنیا بھر میں لاک ڈاؤن کے دوران جہاں بہت سے کاروبار بند ہیں ان میں حجام کی دکانیں بھی شامل ہیں جس کے باعث جہاں کچھ لوگ اپنے بال خود کاٹنے پر مجبور ہیں وہیں بہت سے لاک ڈاؤن ختم ہونے کا انتظار کر رہے ہیں۔

کینیڈا کے وزیراعظم جسٹن ٹروڈو بھی انھی لوگوں میں شامل ہیں جو شاید حجام کی دکان بند ہونے یا پھر زیادہ مصروفیت کے باعث اپنے بال نہیں کٹوا پا رہے۔

لیکن حال ہی میں ایک پریس کانفرنس کے دوران ان کی لمبی زلفوں کا ان کے ماتھے پر آنا اور پھر ان کا اپنے بالوں کو ہاتھوں سے سنوارنے کا انداز سب کو ایسا بھایا کہ سوشل میڈیا صارفین ان کی یہ ویڈیو شئیر کرتے نہیں تھک رہے۔

کسی نے جسٹن ٹروڈو کی اس ویڈیو کو سلو موشن میں پیش کیا تو کسی نے اس کے پیچھے ’اڑیں جب جب زلفیں تیری کنواریوں کا دل مچلے‘ جیسے گانے لگائے۔

یہ بھی پڑھیے

لیکن ان سب تبصروں میں اگر کوئی بات قدر مشترک تھی تو وہ تھی جسٹن ٹروڈو کی لُکس اور ادا۔

لیکن یہ پہلی مرتبہ نہیں کہ کینیڈا کے وزیراعظم اپنے لباس یا شکل کی وجہ سے سوشل میڈیا پر زیر بحث آئے ہیں۔

جسٹن ٹروڈو کو دنیا کے خوش شکل اور خوش لباس رہنماؤں میں شامل کیا جاتا ہے اور اسی لیے ان کی لُکس اکثر ہی میڈیا کی زینت بنی رہتی ہیں۔

وزیراعظم جسٹن ٹروڈو کا لباس اور انداز متعدد بار تنازعے کا باعث بھی بنا۔ حالیہ الیکشن کے دوران ان کے کالج کے زمانے کی چند ایسی تصاویر سامنے آئیں جس میں انھوں نے اپنے آپ کو عرب اور افریقی نسل کا دکھانے کے لیے اپنے چہرے کو میک اپ لگا کر کالا کیا ہوا تھا۔

ان تصاویر کے سامنے آنے کے بعد جسٹن ٹروڈو کی اس حرکت کو تضحیک آمیز قرار دیا گیا اور تنقید کا نشانہ بنایا گیا جس کے بعد جسٹن ٹروڈو نے معافی بھی مانگی۔

اس کے علاوہ سنہ 2018 میں انڈیا کے دورے کے دوران ان کے لباس کے انتخاب کو بھی کافی تنقید کا نشانہ بنایا گیا تھا۔

شوخ رنگ کے کرتے اور شیروانی پہنے پر انڈین ٹوئٹر صارفین کی جانب سے جسٹن کے لباس کو اوور ڈریسنگ قرار دیا گیا۔

لیکن اس بار مرد حضرات اور خواتین اس بات پر متفق ہیں کہ اس پریس کانفرنس میں جسٹن ٹروڈو اپنے لمبے بالوں اور جینز میں بہت دلکش دیکھائی دے رہے تھے۔

فہد ہمایوں نے لکھا: ’پیارے پاکستانی مردوں، اگر جسٹن ٹروڈو کچھ عرصے کے لیے پروفیشنل ہیرکٹ چھوڑ سکتے ہیں تو آپ کیوں نہیں۔

جسٹن ٹروڈو کے سٹائل سے متاثر ایک صارف نے تو یہاں تک کہہ ڈالا کہ ’جسٹن ٹروڈو اگر پاکستان سے الیکشن لڑیں تو جیت جائیں گے۔‘

اب اگر ’اچھی لکس‘ کی بات ہو اور پاکستان کے وزیراعظم عمران خان کا تذکرہ نہ ہو ایسا کیسے ممکن ہے۔

وزیراعظم پاکستان کے ایک فین نے لکھا کہ جب عمران خان ٹریک سوٹ پہنتے ہیں تو ان کو تنقید کا نشانہ بنایا جاتا ہے جبکہ ایک اور صارف کا کہنا تھا اگر ایسا عمران خان کرتے تو سب کہتے یہ نان پروفیشنل ہیر کٹ ہے۔