سکارلٹ کی برہنہ تصاویر انٹرنیٹ پر

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service

امریکی تفتیشی ادارہ ایف بی آئی اداکارہ سکارلٹ جوہانسن کے کمپیوٹر ہیک کرنے کے معاملے کی تفتیش کر رہی ہے۔

ہالی وڈ کی اداکارہ سکارلٹ کا کمپیوٹر ہیک ہوا تھا جس کے بعد ان کی برہنہ تصاویر انٹرنیٹ پر ڈال دی گئی تھیں۔

یہ برہنہ تصاویر اداکارہ نے خود ہی کھینچی تھیں۔

اس سے قبل اداکارہ جیسکا ایلبا کی بھی برہنہ تصاویر منظرِ عام پر آ چکی ہیں۔

ایف بی آئی کا کہنا ہے کہ وہ کسی فرد یا گروہ کے بارے میں تفتیش کر رہے ہیں جو اداکاراؤں یا مشہور شخصیات کے کمپیوٹر ہیک کرتا ہے۔

رپورٹس کے مطابق اس سے قبل گلوکار جسٹن ٹمبرلیک اور ان کی گرل فرینڈ ملا کیونس کی بھی تصاویر منظرِ عام پر آ چکی ہیں۔

ایف بی آئی کی ترجمان کا کہنا ہے کہ درجنوں اداکاراؤں کے کمپیوٹر ہیک ہوئے اور ان کی معلومات چوری کی گئی ہیں۔

سکارلٹ کی جو تصاویر انٹرنیٹ پر آئی ہیں ان میں ایک تصویر میں وہ نیم برہنہ حالت میں بستر پر لیٹی ہوئی ہیں۔ ایک اور تصویر میں انہوں نے تولیا لپیٹا ہوا ہے لیکن ان کے کولہے نظر آ رہے ہیں۔

اسی بارے میں