فنکاروں کی عمر افشا کرنے پر تقنید

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service
Image caption آئی ایم ڈی بی ویب سائٹ پر فلمیں، ٹیلی ویژن شوز، ایکٹرز اور شوبز کی دیگر معلومات کا ذخیرہ دستیاب ہوتا ہے

امریکہ میں اداکاروں کی دو تنظیموں نے فلموں کی ویب سائٹ’ آئی ایم ڈی بی‘ کی اس پالیسی پر تنقید کی ہے جس کے تحت اداکاروں کی عمر اور تاریخ پیدائش کی معلومات فراہم کی جاتی ہیں۔

سکرین ایکٹرز گلڈ اور امریکن فیڈریشن آف دی فیڈریشن اینڈ ریڈیو آرٹسٹ یا اے ایف ٹی آر اے کا کہنا ہے کہ ویب سائٹ’ عمر کے حوالے سے امتیازی سلوک‘ کی حوصلہ افزائی کر رہی ہے۔

ان تنظیموں نے دعویٰ کیا ہے کہ معلومات ویب سائٹ پر دینے سے اداکار ملازمتوں سے فارغ ہو رہے ہیں۔

یہ تنقید اس وقت کی گئی ہے جب ایک امریکی اداکارہ نے ویب سائٹ چلانے والی کمپنی ایمزان پر دس لاکھ ڈالر کے ہرجانے کا دعویٰ کیا۔

وہ اس ویب سائٹ کے ساتھ دو ہزار آٹھ تک منسلک تھیں، ان کا کہنا ہے کہ تاریخ پیدائش کی معلومات دینے سے ان کے اداکاری کے مواقع کم ہو جائیں گے۔

ایک مشترکہ بیان میں دونوں تنظیموں کا کہنا ہے کہ’ایک اداکار کی اصل عمر کا فلم کی کاسٹ میں شامل کیے جانے سے کوئی تعلق نہیں ہے، اداکار پر منحصر ہے کہ وہ کیا عمر بتاتا ہے۔‘

’پروفیشنل اداکاری کی ساری تاریخ میں یہ ایک سچ رہا ہے لیکن ویب سائٹ کے قدم نے اس حقیقت کو شکست سے دوچار کر دیا ہے۔‘

تنظیموں کا کہنا ہے کہ ہزاروں اداکاروں کے نام ان کی رضامندی کے بغیر ویب سائٹ پر جاری کیے گئے ہیں اور ان میں زیادہ تر کوئی مشہور شخصیات نہیں ہیں اور عام لوگ انھیں نہیں جانتے ہیں۔

اسی بارے میں